Friday, 03 February 2023, 04:42:11 am
قائداعظم یونیورسٹی میں نکوٹین پاچز اور تمباکو نوشی کے استعمال کے خلاف پینٹنگ مقابلہ
December 01, 2022

قائداعظم یونیورسٹی کی آرٹ سوساٹی اور کرومیٹک ٹرسٹ نے مشترکہ طور پہ تعلیمی اداروں میں نیکوٹین پاچز اور تمباکو نوشی کی جدید اقسام کے استعمال کے خلاف آگاہی مہم کے حوالے سے طلبا و طالبات کے مابین پینٹنگ مقابلہ کروایا ۔مقابلے کا موضوع نکوٹین پاوچز اور تمباکو نوشی کی جدید اقسام کے استعمال پہ پابندی تھا ۔

اس پینٹنگ مقابلے میں تیس سے زاد طلبا و طالبات نے شرکت کی اور تخلیقی مصوری کے ذریعے نکوٹین پاچز کے انسانی صحت پہ پڑنے والے نقصانات کو نمایاں کیا ۔مقابلے کے اختتام پہ ماہرین نے پہلے ، دوسرے اور تیسرے نمبر پہ آنیوالے طلبا و طالبات کو شیلڈز دیں جبکہ دیگر شرکا کو ان کی بہترین کاوشوں پہ سرٹیفیکٹس دیے گے ۔

اس موقع پہ قاداعظم یونیورسٹی کی آرٹ سوساٹی کی انچارج ڈاکٹر فوزیہ فاروق نے اس پینٹنگ مقابلے کو ملک بھر بالخصوص اعلیٰ تعلیمی اداروں میں نکوٹین پاچز اور تمباکو نوشی کی جدید اقسام کے استعمال کے خلاف بہت بڑی کامیابی قرار دیا ۔ اس موقع پہ قاداعظم یونیورسٹی کی آرٹ سوساٹی کی انچارج کا کہنا تھا کہ اگر ہمیں طلبا و طالبات کا مستقبل تابناک بنانا ہے تو تعلیمی اداروں کو نشے کی لعنت سے پاک کرنا ہو گا۔

اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کرومیٹک ٹرسٹ کے سی ای او شارق خان نے مقابلے میں شریک طلبا و طالبات اور قاداعظم یونیورسٹی کی آرٹ سوساٹی کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ تمباکو نوشی اور نکوٹین پاچز سمیت نشے کی دیگر جدید اقسام کے استعمال کا اصل ہدف نوجوان ہیں ۔

شارق خان کا کہنا تھا کہ متوسط طبقے سے جامعات تک پہنچنے والے طلبا و طالبات انتہائی مشکلات کے بعد اس سطح پہ پہنچتے ہیں اور ہماری کوشش ہے کہ نکوٹین پاچز اور دیگر اقسام کے نشے سے کسی کی بھی عمر بھر کی محنت ضاع نہ ہو ۔

شارق خان کا کہنا تھا کہ یہ بچے ہمارا مستقبل ہیں اور پاکستان کی باگ ڈور انہی کے ہاتھ میں ہے اس لیے ہمیں ان کا ہر برائی سے تحفظ کرنا ہو گا اور اس کا بہترین طریقہ برائی کے خلاف آگاہی ہے اور ہم کٹھن حالات میں بھی یہ سفر جاری رکھیں گے اور وہ دن دور نہیں جب پاکستان تمباکو سے پاک ممالک کی فہرست میں شامل ہو گا۔

Error
Whoops, looks like something went wrong.