وزیر تجارت خرم دستگیر نے بحرینی ہم منصب کے ہمراہ پریس کانفرنس میں کہا کہ پاکستان اور بحرین نے نجی شعبوں کی مدد سے سرمایہ کاری اور تجارت کو فروغ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

30 مارچ 2017 (14:26)
0

پاکستان اور بحرین نے دوطرفہ تجارت کا حجم  دستیاب مواقعوں کے مطابق بڑھانے پر اتفاق کیا ہے۔آج اسلام آباد میں بحرین کے وزیر تجارت وصنعت زاہد ر الزایانی کے ہمراہ مشترکہ نیوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر تجارت خرم دستگیر نے کہا کہ پاکستان اور بحرین نے نجی شعبوں کی مدد سے سرمایہ کاری اور تجارت کو فروغ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان ، بحرین کو سبزیاں ، گوشت اور پھل برآمد کرے گا۔

اس سے پہلے آج اسلام آباد میں پاکستان بحرین دوسری کاروباری مواقع کانفرنس میں اظہار خیال کرتے ہوئے وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان بحرین کے ساتھ اقتصادی روابط کو مضبوط بنانے کیلئے پرعزم ہے۔انہوں نے کہا کہ دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں میں پہلے ہی قریبی تعاون قائم ہے۔خرم دستگیر نے کہا کہ پاکستان کے عوام نے دہشت گردی کے چیلنج سے نمٹنے میں منفرد عزم وحوصلے کا مظاہرہ کیا۔وفاقی وزیر نے کہا کہ حکومت امن برقرار رکھنے کے لئے پرعزم ہے جو معاشی ترقی کیلئے ناگزیر ہے۔

خرم دستگیر خان نے کہا کہ تجارتی واقتصادی تعاون کے فروغ سے پاکستان اور بحرین کے درمیان طویل مدتی برادرانہ تعلقات مزید مضبوط ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ تجارت کے شعبے میں دونوں ملکوں کے تعلقات نئے دور میں داخل ہو چکے ہیں۔وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان میں غیرملکی سرمایہ کاری کے لئے یہ صحیح وقت ہے۔انہوں نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری کا اہم منصوبہ پاکستان کو ترقی وخوشحالی کی نئی بلندیوں پر لے جائے گا۔

پاکستان بحرین دوسری کاروباری مواقع کانفرنس کےموقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے بحرین کے لئے پاکستان کے سفیر جاوید ملک نے کہا کہ پاکستان نے ایک وسیع البنیاد پالیسی اختیار کر رکھی ہے اور وہ مختلف شعبوں میں تعاون کے فروغ کے حوالے سے تمام اقدامات کی حمایت کرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بحرین کے ساتھ تجارت اور سرمایہ کاری کے فروغ کے لئے ویزہ پالیسی کو آسان بنایا جا رہا ہے۔
وفاق ہائے ایوان صنعت وتجارت پاکستان کے صدر زبیر طفیل نے کہا کہ پاکستان میں سرمایہ کاری کے وسیع تر مواقع موجود ہیں اور ہم اپنے بحرینی بھائیوں کو پاکستان میں سرمایہ کاری کی دعوت دیتے ہیں اور ان کا خیرمقدم کرتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ ٹیلی مواصلات ، سیاحت اور بنیادی ڈھانچے کے شعبے تیزی سے فروغ پا رہے ہیں اور ان شعبوں میں سرمایہ کاری کے وسیع تر مواقع موجود ہیں۔بحرین کے ایوان صنعت وتجارت کے صدر خالد الموعید نے کہا کہ ہمیں پاکستان کی حکومت اور عوام کی طرف سے حمایت اور پرتپاک خیرمقدم کئے جانے کی خوشی ہے۔
انہوں نے کہا کہ دونوں ملکوں کے درمیان کئی اقدار مشترک ہیں اور تجارت وصنعت کے شعبے میں تعاون کے فروغ سے دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات کا دائرہ وسیع ہوا ہے۔