جنرل قمر جاوید باجوہ کی پارا چنار میں قبائلی عمائدین اور دھرنے کے نمائندوں سے گفتگو۔

30 جون 2017 (19:18)
0

بری فوج کے سربراہ جنرل قمرجاوید باجوہ نے کہا ہے کہ ہمارے دشمن ہمارے عزم کو کمزور کرنے اور ہمیں تقسیم کرنے میں ہرگز کامیاب نہیں ہوں گے۔
انہوں نے یہ بات جمعہ کے روز پاراچنار میں قبائلی عمائدین اور دھرنے کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
بری فوج کے سربراہ نے کہا کہ حالیہ واقعات میں غیر ملکی ہاتھ کے ملوث ہونے کے واضح ثبوت موجود ہیں۔
انہوں نے کہا کہ مقامی سہولت کاروں اور مددگاروں کو گرفتار کرلیا ہے اور ان کے خلاف فوجی عدالتوں میں مقدمات چلائے جائیں گے۔
انہوں نے کہا کہ پاراچنار کی سیکورٹی میں اضافے کیلئے فوجی بھیجے گئے ہیں اور پاک افغان سرحد کو موثر انداز سے سیل کرنے کیلئے ایف سی کے فوجیوں نے اقدامات سخت کردئے ہیں انہوں نے کہا کہ چیک پوسٹوں پو طوری رضاکار بھی تعینات کئے جارہے ہیں۔
جنرل قمر جاوید باجوہ نے دھماکہ کے بعد افراتفری کی صورتحال سے نمٹنے کیلئے ایف سی اہلکاروں کی فائرنگ کی تحقیات کی یقین دہانی کرائی دھماکے کے بعد کی صورتحال کی تحقیقات جاری ہیں اور اس کے ذمہ دار نہیں ۔
انہوں نے کہا کہ فوج فاٹا کے مرکزی دھارے میں شمولیت کی مکمل حمایت کرتی ہے جس پر عمل کے اجارہا ہے اور پائیدار امن واستحکام کیلئے اس پر جلس عملدرآمد ناگزیر ہے ۔
انہوں نے کہا کہ پاک فوج ملک میں حالات معمول پر لانے کیلئے کوششیں جاری رکھے گی۔
جنرل باجوہ نے فرقہ واریت پھیلانے کے ایجنڈے کے خچے کے خلاف متحدہ ثابت قدم، تیار اور چوکس رہنے کی ضرورت پر زور دیا۔
اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے قبائلی عمائدین نے فوج اور اس کی قیادت پر مکمل اعتماد ظاہر کیا۔
ادھر پاراچنار کے قبائلی رہنمائوں نے بری فوج کے سربراہ کے دورے کے بعد دھرناختم کردیا۔