وزیر خزانہ اسحق ڈار نے صوبائی حکومتوں پر زو ر دیا کہ وہ آزاد کشمیر ، گلگت بلتستان اور فاٹا کی ترقی کے لئے فراخدلی کا مظاہرہ کریں۔

بنیادی ڈھانچے اور انسانی وسائل کی ترقی کیلئے10کھرب روپے مختص
29 مئی 2017 (20:13)
0

وزیر خزانہ اسحق ڈار نے صوبائی حکومتوں پر زو ر دیا ہے کہ وہ آزاد کشمیر ، گلگت بلتستان اور فاٹا کی ترقی کے لئے فراخدلی کا مظاہرہ کریں۔

انہوں نے پیر کے روز سینٹ میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ بجٹ کی منظوری کے بعد اس معاملے پر صوبائی وزرائے اعلیٰ کا اجلاس ہوگا۔
انہوں نے کہا کہ گزشتہ کئی برسوں میں ٹیکس وصولی میں نمایاں اضافہ ہوا ہے اور قابل تقسیم محاصل میں قبائلی علاقہ جات، آزاد جموں و کشمیر اور گلگت بلتستان کے حصے کے باعث صوبوں کے لئے مختص بجٹ متاثر نہیں ہوگا۔
وزیر خزانہ نے یقین دلایا کہ اگلے بجٹ کے بارے میں ایوان کی اچھی سفارشات اس میں شامل کی جائیں گی۔
سلیم مانڈوی والا نے آئندہ مالی سال بجٹ پر بحث کا آغاز کرتے ہوئے مسلسل پانچواں بجٹ پیش کرنے پر وزیر خزانہ کو مبارکباد دی۔
تاہم انہوںنے کہا کہ بجٹ میں عام آدمی کیلئے کچھ نہیں ہے، انہوں نے تنخواہوں اور پنشن میں دس فیصد اضافے کو انتہائی قلیل اضافہ قرار دیا۔
چوہدری تنویر نے کہا کہ اب عالمی مالیاتی ادارے گزشتہ چار سال میں حاصل کی گئی کامیابیوں کی تعریف کر رہے ہیں۔
نعمان وزیرعلی نے کہا کہ خسارے میں چلنے والے اداروں کی نجکاری کی جانی چاہئیے ۔
انہوں نے کہا کہ منصوبہ بندی کمیشن کو پسماندہ علاقوں کی ترقی اور غربت کے خاتمے میں کلیدی کردار ادا کرنا چاہئیے۔
سجاد حسین طوری نے کہا کہ قبائلی علاقوں کی ترقی کے لئے مناسب فنڈز مختص کئے جانے چاہئیں تاکہ انہیں ملک کے ترقی یافتہ علاقوں کے برابر لایا جا سکے۔
اعظم خان سواتی نے کہا کہ ٹیکس وصولی میں اضافے کے لئے فیڈرل بورڈ آف ریونیو میں اصلاحات کی جانی چاہئیں۔
ایوان کا اجلاس اب کل دن گیارہ بجے ہو گا۔