وزیراعظم کے خصوصی معاون شجاعت عظیم کے مطابق سعودی عرب کے شہری ہوابازی کے ادارے نے پی آئی اے کو کلیئرنس دی ہے۔

یمن میں پھنسے پاکستانیوں کے انخلاء کیلئے پی آئی اے کی پرواز الحدیدہ روانہ
29 مارچ 2015 (12:16)
0

پاکستان نے یمن میں محصور اپنے شہریوں کو واپس لانے کیلئے خصوصی طیارہ بھیجا ہے۔  سرکاری ترجمان نے کہا ہے کہ پاکستانیوں کو واپس لانے کیلئے پی آئی اے کا جمبوجیٹ 747 طیارہ کراچی سے یمن کے شہر الحدیدہ کیلئے روانہ ہوگیا ہے جبکہ پی آئی اے کا ایک اور طیارہ آج تیسرے پہر الحدیدہ روانہ ہوگا۔


وزیراعظم محمد نوازشریف محصور پاکستانیوں کے انخلاء کے عمل کی خودنگرانی کررہے ہیں۔  واضح رہے کہ چھ سو سے زائد پاکستانی قافلے کی شکل میں صنعاء سے الحدیدہ پہنچے ہیں جووہاں وطن واپسی کیلئے طیاروں کے منتظر ہیں جبکہ یمن میں بمباری اور لڑائی کے باعث پی آئی اے حکام کو طیارہ بھیجنے میں مشکلات کاسامنا ہے۔

ترجمان نے کہاکہ سعودی عرب کی طرف سے جو یمن میں حوثی باغیوں کے خلاف کارروائی کی قیادت کررہا ہے کلیئرنس ملنے کے بعد پہلی پرواز بھیجی گئی ہے۔ 

ادھر محصور پاکستانیوں کی واپسی میں مدد کیلئے پاک بحریہ کا ایک جہاز بھی یمن روانہ ہوگیا ہے۔ پاک بحریہ کے ترجمان کے مطابق یہ جہاز کسی بھی صورتحال سے نمٹنے کیلئے خلیج عدن میں موجود رہے گا ۔

یمن میں پاکستانی سفیر ڈاکٹر عرفان شامی نے کہا ہے کہ 95 فیصد پاکستانیوں کا یمن سے انخلاء جلد مکمل کرلیاجائے گا۔

ایک انٹرویو میں انہوں نے کہاکہ پی آئی اے کی خصوصی پرواز کے ذریعے تقریبا ً چارسواسی پاکستانی یمن سے پاکستان روانہ ہوجائیںگے انہوں نے واپسی کے عمل میں تعاون کرنے پرپاکستانی برادری کاشکریہ ادا کیا ۔