وزیراعظم نوازشریف نے اتاترک ائیرپورٹ پر خودکش بم دھماکے کی سخت مذمت کی ہے ۔

 ترکی میں ائیرپورٹ پر فائرنگ اور خودکش بم حملوں میں 36 افراد ہلاک
29 جون 2016 (10:15)
0

ترکی میں استنبول ائیرپورٹ پر فائرنگ اور خودکش بم حملوں سے کم از کم چھتیس افراد ہلاک اور سو سے زیادہ زخمی ہوگئے ہیں۔استنبول کے گورنر واسپ ساہن کے مطابق تین خودکش حملہ آوروں نے اتاترک انٹرنیشنل ائیرپورٹ کے داخلی راستے پر خودکو دھماکے سے اڑانے سے پہلے فائرنگ کی۔حکام کا کہنا ہے کہ ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد میں اضافہ ہوسکتا ہے۔

صدر ممنون حسین نے ترکی میں دہشت گردوں کے حملے کی مذمت کی ہے۔دلخراش واقعے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام دکھ کی اس گھڑی میں ترک بھائیوں کے ساتھ ہے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کا مقابلہ کرنے کیلئے اسلامی ملکو ں کو متحد ہونا چاہیے۔
وزیراعظم نوازشریف نے استنبول کے اتاترک ائیرپورٹ پر خودکش بم دھماکے کی سخت مذمت کی ہے جس میں کئی بے گناہ افرا د ہلاک ہوئے۔ایک پیغام میں انہوں نے قیمتی جانوں کے نقصان پر ترکی کی حکومت اور عوام کے ساتھ دلی تعزیت کی۔ ترکی کے عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتے ہوئے وزیراعظم نے ہر قسم کی دہشت گردی کی مذمت کی۔

پنجاب کے وزیراعلیٰ محمد شہباز شریف نے بھی استنبول کے ہوائی اڈے پر بد ترین دھماکوں کی مذمت کی ہے۔ایک بیان میں انہوں نے حملے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔وزیراعلیٰ نے کہا پاکستان کے عوام مشکل کی گھڑی میں ترک بھائیوں کے ساتھ ہیں۔

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل بان کی مون نے استنبول میں اتاترک بین الاقوامی ہوائی اڈے پر دہشت گردوں کے حملے کی مذمت کی ہے۔انہوں نے متاثرہ خاندانوںکے ساتھ تعزیت اور ترکی کی عوام اور حکومت کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا ہے۔