آئی ایف جے کا مقبوضہ کشمیر میں سماجی ذرائع ابلاغ پر پابندی پراظہار تشویش
28 اپریل 2017 (12:43)
0

صحافیوں کی عالمی فیڈریشن آئی ایف جے نے مقبوضہ کشمیر میں سماجی ذرائع ابلاغ پر پابندی پر تشویش ظاہر کی ہے۔ایک بیان میں فیڈریشن نے مطالبہ بھی کیا ہے کہ یہ پابندی فوری طور پر اٹھائی جائے ور اطلاعات تک رسائی کے بارے میں شہریوں کے حقوق کا احترام کیا جائے۔
فیڈریشن نے کہا کہ کشمیر میں 2016 سے چودہ بار انٹرنیٹ پر پابندی عائد کی گئی ہے اور صرف 2017 میں چار بار پابندی لگائی گئی جس سے بھارت دنیا میں انٹرنیٹ پر سب سے زیادہ پابندی عائد کرنے والا پہلا ملک بن گیا ہے۔
فیڈریشن نے کہا کہ انٹرنیٹ پر پابندی سنسر شپ کی ایک شکل ہے اور یہ لوگوں کے اظہار رائے کی آزادی کے بنیادی حق کے خلاف ہے۔