ریڈیوپاکستان کےساتھ ایک انٹرویومیں وزیرامورکشمیر اور گلگت بلتستان نے کہا کہ کشمیر پاکستان اور بھارت کے درمیان اہم مسئلہ ہے اور اسے مذاکرات کے ذریعے حل کیا جانا چاہئے ۔

وزیراعظم نے جنرل اسمبلی میں کشمیری عوام کی خواہشات کی ترجمانی کی ہے:برجیس
27 ستمبر 2014 (15:05)
0

امور کشمیر اور گلگت بلتستان کے بارے میں وفاقی وزیر برجیس طاہر نے کہا ہے کہ وزیراعظم نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں اپنی تقریر میں مسئلہ کشمیر کو موثر انداز میں اجاگر کیا ہے۔آج ریڈیو پاکستان کے ساتھ ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے اپنے خطاب میں کشمیری عوام کی خواہشات کی ترجمانی کی ہے۔

 

وفاقی وزیر نے کہا کہ کشمیر پاکستان اور بھارت کے درمیان اہم مسئلہ ہے اور اسے مذاکرات کے ذریعے حل کیا جانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ بھارت کی طرف سے خارجہ سیکرٹری سطح کے مذاکرات کی منسوخی سے دنیا کو اچھا پیغام نہیں گیا۔


برجیس طاہر نے عالمی برادری اور انسانی حقوق کی تنظیموں پر زور دیا کہ وہ بھارت پر دباؤ ڈالے کہ وہ دیرینہ مسئلہ کشمیر کو کشمیری عوام کی امنگوں کے مطابق حل کرنے کے لئے مذاکرات شروع کرے۔


ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر نے کہا کہ اگر اقوام متحدہ مشرقی تیمور میں ریفرنڈم کرا سکتا ہے تو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں استصواب رائے کیوں نہیں کرایا جا سکتا۔