نوازشریف نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان کے عوام کو جوابدہ ہے اور انہوں نے ہی فیصلہ کرنا ہے کہ کس جماعت نے خدمت کی ہے اور کس نے نہیں کی۔

26 مئی 2017 (15:03)
0

وزیراعظم محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ حکومت معاشرے کے مختلف طبقات کی طرف سے مخالفت کے باوجود نظم ونسق میں مثبت اصلاحات لانے کیلئے پرعزم ہے ۔وہ آج اسلام آباد میں پاکستان مسلم لیگ ن کی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔ وزیراعظم نے کہا کہ حکومت پاکستان کے عوام کو جوابدہ ہے اور انہوں نے ہی فیصلہ کرنا ہے کہ کس جماعت نے خدمت کی ہے اور کس نے نہیں کی۔

نواز شریف نے کہا کہ آج کا پاکستان اس پاکستان سے کہیں زیادہ مضبوط اور مستحکم ہے جو موجودہ حکومت کو 2013 میں مسائل کے ساتھ وراثت میں ملا تھا۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان مسلم لیگ ن کی حکومت نے سخت محنت کی ہے اور اب ہر کوئی ان ترقیاتی منصوبوں کو دیکھ سکتا ہے جو شفافیت کے ساتھ تیزی سے مکمل کئے جا رہے ہیں۔
وزیراعظم نے کہا کہ حکومت نہ صرف توانائی کے منصوبوں پر کام کر رہی ہے بلکہ اس کا مقصد صارفین کو ارزاں نرخوں پر بجلی فراہم کرنا ہے ۔ سی پیک منصوبے تیزی سے مکمل ہورہے ہیں اور آئندہ چند ماہ میں تین ہزار چھ سو میگاواٹ بجلی نیشنل گرڈ میں شامل کردی جائے گی۔
آئندہ مالی سال کے لئے فنڈز مختص کرنے کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ ملکی تاریخ میں دس کھرب کا ترقیاتی بجٹ بے مثال ہے ۔ حکومت آزادکشمیر ، گلگت بلتستان اور فاٹا کی ترقی پر بھی توجہ دے رہی ہے ۔
انہوں نے کہاکہ پورے ملک کی شاہراہوں اور موٹر ویز کے نیٹ ورک سے منسلک کیا جارہا ہے ۔ یہ روابط کاروبار ، صنعت اور برآمدات کے لئے بھاری تعداد میں سرمایہ لائیں گے۔
وزیراعظم نے پارٹی کے ارکان کو ہدایت کی کہ وہ اپنے حلقوں کے مسائل حل کرنے کے لئے محنت سے کام کریں۔