منصوبہ بندی اورترقی کے وزیر نے کہا ہے کہ این ایل سی کو لاجسٹک کے شعبے میں ملک کی مستقبل کی ضروریات کومدنظررکھتے ہوئے ملکی ترقی میں اپنا کرداراداکرناچاہیے۔

اقتصادی راہداری سے لاجسٹکس کی صنعت سمیت مختلف شعبوں میں ترقی کی نئی راہیں کھلیں گی:احسن
26 اگست 2016 (12:43)
0

منصوبہ بندی اورترقی کے وزیراحسن اقبال نے کہاہے کہ نیشنل لاجسٹک سیل کو چین پاکستان اقتصادی راہداری کے بڑے منصوبے سے زیادہ سے زیادہ فائدہ حاصل کرنے کیلئے سامان کی نقل وحمل کاماسٹرپلان وضع کرناچاہیے۔انہوں نے اسلام آباد میں نیشنل لاجسٹک بورڈ کے انسٹھ ویں اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہاکہ چین پاکستان اقتصادی راہداری سے لاجسٹکس کی صنعت سمیت مختلف شعبوں میں ترقی کی نئی راہیں کھلیں گی جس کیلئے مختصر، درمیانی اورطویل مدت منصوبہ بندی انتہائی اہمیت کی حامل ہے۔
احسن اقبال نے کہاکہ این ایل سی کو لاجسٹک کے شعبے میں ملک کی مستقبل کی ضروریات کومدنظررکھتے ہوئے ملکی ترقی میں اپنا کرداراداکرناچاہیے۔انہوں نے ادارے کوچین پاکستان اقتصادی راہداری کے مغربی روٹ خصوصاً گوادر، ڈیرہ اسماعیل خان، رتوڈیرو اورسکھرسیکشن میں ذرائع نقل وحمل کے مواقع تلاش کرنے کی ہدایت کی۔
بورڈ نے تفصیلی غوروخوض کے بعدمالی سال دوہزارسولہ سترہ کیلئے این ایل سی کے بجٹ کی منظوری دی۔