سرتاج عزیز نے کہا کہ چین کے ساتھ پاکستان کے تعلقات ہماری خارجہ پالیسی بنیادی ستون ہے۔

پاک افغان تعلقات،پاکستان افغانستان اورچین کا وزرائے خارجہ سطح کے مذاکرات پر اتفاق
25 جون 2017 (20:19)
0

پاکستان اور چین نے امن اور سلامتی کے مشترکہ چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے باہمی تعاون اور رابطے کو مذید مستحکم کرنے پر اتفاق کیا ہے۔
یہ بات مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے آج اسلام آباد میں چین کے وزیرخارجہ وانگ ژی کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔
سرتاج عزیز نے کہا کہ پاکستان مسلسل یہ بات کہتارہا ہے کہ افغانستان میں امن وسلامتی ہمارے مفاد میں ہے اور ایک مستحکم افغانستان سے اقتصادی ترقی اور علاقائی روابط کے ہمارے مشترکہ ایجنڈے کے فروغ میں مدد ملے گی۔
انہوں نے کہا کہ چین کے ساتھ پاکستان کے تعلقات ہماری خارجہ پالیسی بنیادی ستون ہے۔
سرتاج عزیز نے کہا کہ ہم نے دوطرفہ تعلقات، بشمول سیاسی، اسٹرٹیجک اور اقتصادی تعاون میں پیش رفت کا جائزہ لیا اور پاکستان اور چین کے درمیان سدابہار دوستی کو مذید فروغ دینے کیلئے شعبوں کی نشاندہی کی ہے۔
مشیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان بھارت سمیت تمام ہمسایہ ممالک کے ساتھ پر امن تعلقات چاہتا ہے اور جنوبی ایشیاء میں اسٹرٹیجک توازن کی ضرورت ہے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان نے چین کو انسداد ، سرحدی انتظام اور افغان پناہ گزینوں کی رضاکارانہ واپسی سے متعلق افغان حکومت کے ساتھ تعاون مستحکم کرنے کی اپنی کوششوں کے بارے میں بتایا ۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان خطے میں امن اور اہم آہنگی کے فروغ کیلئے تعمیری تجاویز دینے پر چین کا شکرگزار ہے۔
سرتاج عزیز نے کہا کہ ان تجاویز کے مطابق پاکستان، افغانستان اور چین نے پاک افغان تعلقات کے تمام پہلوئوں خصوصا اقتصادی تعاون کے بارے میں تبادلہ خیال کیلئے وزرائے خارجہ کی سطح کی بات چیت پر اتفاق کیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ افغانستان اور پاکستان کے درمیان بحران کے حل کا باہمی طریقہج کار وضع کرنے پر بھی اتفاق کیا گیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ اس سے دونوں ملکوں میں دہشتگردوں کے حملوں سمیت کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے بروقت اور موثر رابطے برقرار رکھنے میں مدد ملے گی۔
انہوں نے کہا کہ افغانستان، پاکستان اور چین نے افغان حکومت اور طالبان کے درمیان مذاکرات کیلئے سازگار ماحول قائم کرنے کی غرض سے چار ملکی رابطہ گروپ کے عمل کی بحالی پر بھی اتفاق کیا۔
اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے چین کے وزیرخارجہ وانگ ژی نے کہا کہ پاکستان خطے میں امن اور استحکام یقینی بنانے میں اہم کردار ادا کررہا ہے۔
انہوں ںے کہا کہ پاکستان نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں بے مثال قریانیاں دی ہیں اور دنیا کو ان کوششوں کو تسلیم کرنا اور سراہنا چاہیے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت منصوبوں کی تکمیل میں بھی اہم کردار ادا کررہا ہے جو ایک خطہ ایک سڑک ویژن کا حصہ ہے۔
انہوں نے کہا کہ چین ترقی اور خوشحالی یقینی بنانے کیلئے ایک پر امن اور مستحکم افغانستان کا خوہشمند ہے اور دیرپا امن کیلئے پاکستان اور افغان حکومت کے ساتھ مل کر کام کرے گا۔