وزیراعظم نوازشریف نے اپنے اور اپنے خاندان کے خلاف جاری احتساب کو ملک کے ترقیاتی عمل کے خلاف سازش قرار دیا ہے۔

file photo

نام نہاد احتساب کے نام پر پاکستان کاقیمتی وقت ضائع کیاجارہاہے:وزیر اعظم
25 جون 2017 (06:49)
0

وزیراعظم نوازشریف نے اپنے اور اپنے خاندان کے خلاف جاری احتساب کو ملک کے ترقیاتی عمل کے خلاف سازش قرار دیا ہے۔

لندن پہنچنے پر صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے انہوں نے اس اعتماد کا اظہار کیا کہ سازش بھی ناکام بنا دی جائے گی۔
وزیراعظم نے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کی کارروائی کو غیر سنجیدہ قراردیا اورکہا ہر کوئی اس طرح کی مشترکہ تحقیقاتی ٹیموں کی تاریخ سے آگاہ ہے جو ہمارے مخالفین سے معلومات حاصل کررہی ہیں۔
نوازشریف نے کہا کہ تحقیقات کے دوران مشترکہ تحقیقاتی ٹیم نے ان کے کسی سوال کاجواب نہیں دیا۔وزیراعظم نے کہا کہ نام نہاد احتساب کے نام پر پاکستان کا قیمتی وقت ضائع کیا جارہا ہے انہوں نے کہا کہ ایک مرتبہ وزیراعلیٰ اورتین مرتبہ ملک کا وزیراعظم رہنے کی حیثیت سے کوئی ان پر انگلی نہیںاٹھا سکتا۔
نواز شریف نے کہا کہ در حقیقت ہمارے مخالفین سے ملک کی تیز تر ترقی برداشت نہیں ہورہی ہے اس لئے وہ ترقی کی راہ میں روڑے اٹکا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ترقی مخالف عناصر کودوہزار تیرہ کے عام انتخابات میں شکست ہوئی تھی اور اگلے سال ہونے والے عام انتخابات میں ایک مرتبہ پھر انہیں شکست کا سامنا کرنا ہوگا۔
انہوں نے کہا کہ تقریباً پچانوے فیصد ضمنی انتخابات میں بھی مسلم لیگ(ن) کے مخالفین کو شکست ہوئی اور اگلے عام انتخابات میں اپنی شکست کے خطرے کے پیش نظر وہ پھر حکومت کے خلاف سازشیں کررہے ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ جب کبھی پاکستان نمایاں رفتار سے ترقی کی راہ پر گامزن ہوتا ہے تو مخالفین ترقیاتی عمل کے خلاف سازشیں شروع کردیتے ہیں، انہوں نے اس بات پر افسوس کااظہار کیاکہ ترقی مخالف عناصر نے چین کے صدر کے دورہ پاکستان میں رکاوٹ ڈالی جس کے نتیجے میں چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے پر کام کے آغاز میں ڈیڑھ سال تاخیرہوئی۔

انہوں نے کہاکہ ہم ملک کو بحران سے نکالنے کیلئے تمام ممکنہ کوششیں کریں گے، انہوںنے کہاکہ حکومت کے ٹھوس اقدامات کے نتیجے میں ملک میں لوڈشیڈنگ تقریباً ختم ہوگئی ہے۔