منصوبہ چین کی گولڈ ونڈکمپنی کی جانب سے تیارکردہ پینتیس ٹربائنوں پرمشتمل ہے۔

چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت پہلے پون بجلی منصوبے نے باقاعدہ کام شروع کردیا
24 جون 2017 (07:20)
0

چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت پاکستان کے فوری نوعیت کے توانائی کے پہلے پون بجلی منصوبے نے آزمائشی مرحلہ کامیابی سے مکمل کرنے کے بعد باقاعدہ کام شروع کردیاہے۔ سچل انرجی ڈویلپمنٹ (پرائیویٹ لمیٹڈ)کاتعمیرکردہ انچاس اعشاریہ پانچ میگاواٹ گنجائش کابجلی گھرسندھ کے علاقے جھمپیر میں680ایکڑپرمحیط ہے۔
گلوبل ٹائمز کے مطابق منصوبے کی کامیابی چین پاکستان اقتصادی راہداری کی تعمیر اور ایک خطہ ایک سڑک منصوبے کیلئے اچھی مثال ہے۔ یہ منصوبہ چین کی گولڈ ونڈ کمپنی کی جانب سے تیارکردہ 33 ٹربائنوں پرمشتمل ہے۔
چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت پاکستان اورچین نے توانائی اوربنیادی ڈھانچے کے شعبوں میں ستاون ارب ڈالرمالیت کے منصوبوں پر دستخط کئے ہیں۔
اقتصادی راہداری کے تحت زیادہ ترمنصوبوں کاتعلق توانائی کے شعبے سے ہے جن میں قابل تجدیدتوانائی اورماحول دوست توانائی کے منصوبے بھی شامل ہیں تاکہ بجلی کی طلب اور رسد میں فرق دور کیاجاسکے۔