24 جولائی 2016 (10:06)
0

وزارت خزانہ نے ذرائع ابلا غ کی اس خبر کی تردید کی ہے کہ موجودہ حکومت نے گزشتہ تین سال کے دوران بینکوں سے قرضے معاف کرائے۔ وزارت خزانہ کے ترجمان نے اسلام آباد میں بتایا کہ سٹیٹ بینک نے گزشتہ تیس برسوں کے دوران کمرشل بینکوں کی جانب سے قرضے معاف کیے جانے سے متعلق بعض اعدادو شمار فراہم کیے ہیں۔

ترجمان نے کہا کہ سینٹ کے سامنے ایسی کوئی رپورٹ پیش نہیں کی گئی جس میں کہا گیا ہو کہ موجودہ حکومت نے کوئی قرضہ معاف کرایا ہے۔
انہوں نے کہا کہ حکومت کا بینکوں سے قرض معاف کرانے سے کوئی تعلق نہیں بلکہ یہ ایک معمول کی کارروائی تھی جسے کمرشل بینکوں نے سٹیٹ بینک کے قواعد و ضوابط کے تحت کیا۔