Tuesday, 25 June 2019, 04:27:46 am
خطے میں ہونے والی حالیہ تبدیلیوں کے پیش نظر حکمت عملی ضروری ہے،سردار مسعود
May 24, 2019

ثآزادکشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے قومی سلامتی کے ماہرین اور پالیسی سازوں پر زور دیا ہے کہ وہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے دوسری مرتبہ اقتدار میں آنے کے تناظر میں خطے میں امن و استحکام کے لئے جامع حکمت عملی مرتب کریں۔

اسلام آباد میں ایک کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ خطے میں ہونے والی حالیہ تبدیلیوں کے پیش نظر حکمت عملی ضروری ہے۔انہوں نے زور دیا کہ اس حکمت عملی کا مقصد پاکستان کو بھارت کے مقابلے میں محفوظ و مستحکم بنانا ہے۔مسئلہ کشمیر کو پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی اور محاذ آرائی کی بنیادی وجہ قرار دیتے ہوئے مسعود خان نے کہا کہ ہماری کشمیر پر سیاسی اور سفارتی حکمت عملی ایسی ہونی چاہئے جو پاکستان کو اقتصادی، سیاسی اور تذویراتی لحاظ سے مضبوط بنائے۔پاکستان، کشمیری عوام اور بھارت میں مقیم مسلمان برادری کے حوالے سے بی جے پی کے ایجنڈے کے بارے میں صدر نے کہا کہ نریندر مودی نے اپنی حالیہ انتخابی مہم میں مسلمان کش جذبات کو ابھارا ہے اور پاکستان اور کشمیریوں کو دشمن کے طور پر پیش کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ بی جے پی کے انتخابی منشور میں آرٹیکل 370 اور آرٹیکل 37-A کو منسوخ کرنے کی بات کی گئی ہے جس کا مقصد ریاست کی علامتی خودمختاری کو سلب کرنا ہے۔