ممنون حسین نے کہا کہ فاٹا کے عوام کو اعتماد میں لئے بغیرکوئی آئینی تبدیلی نہیں کی جائے گی۔

اصلاحاتی کمیٹی فاٹا کی بہتری کیلئے ترجیحی بنیاد پر کام کر رہی ہے:صدر
23 مئی 2016 (19:11)
0

صدر ممنون حسین نے کہا ہے کہ حکومت کی اصلاحاتی کمیٹی فاٹا کی بہتری کیلئے ترجیحی بنیاد پر کام کررہی ہے۔انہوں نے پیر کے روز اسلام آباد میں فاٹا کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے یقین ظاہر کیا کہ اصلاحات متعارف کے بعد علاقے کی صورتحال بہتر ہو جائے گی۔صدر نے کہاکہ فاٹا کے عوام کو اعتماد میں لئے بغیرکوئی آئینی تبدیلی نہیں کی جائے گی۔

ممنون حسین نے کہا کہ حکومت نے بے گھر افراد کی دوبارہ آباد کاری کیلئے خطیر رقم مختص کی ہے انہوں نے کہا کہ تین ایجنسیوں کے بے گھر افراد کی ان کے گھروں کو واپسی کا عمل مکمل کرلیا گیا ہے جبکہ دوسری تین ایجنسیوں میں یہ عمل جلد مکمل کرلیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ آپریشن ضرب عضب کے مثبت نتائج برآمد ہوئے ہیں اور فاٹا کو سات ایجنسیوں میں صورتحال معمول پر آرہی ہے۔صدر نے کہا کہ حکومت فاٹا میں دہشت گردی کی سرگرمیوں کے باعث تباہ شدہ بنیادی ڈھانچے کی تعمیر نو میں کوئی کسر اٹھا نہ رکھے گی۔
ممنون حسین نے کہا کہ تعلیمی اداروں کی ترقی' سڑکوں کے نیٹ ورک اور ہسپتالوں کی تعمیر حکومت کی بنیادی ترجیحات میں شامل ہیں۔صدر نے کہا کہ فاٹا کے نوجوان انتہائی باصلاحیت ہیں اور وہ جدید تعلیم سے آراستہ ہوکر ملک کا نام روشن کرسکتے ہیں۔انہوں نے خواتین کی تعلیم پر توجہ دینے پر زور دیا تاکہ وہ قبائلی علاقوں کی ترقی میں مثبت کردار ادا کرسکیں۔