ممنو ن حسین نے کہا کہ پاکستان دنیا سے تنازعات ، دہشت گردی کے خاتمے کیلئے اپنا کردار ادا کرتا رہے گا۔

دہشت گردوں کیخلاف آپریشن حتمی مرحلہ میں داخل ہو چکا ہے:صدر
23 مارچ 2016 (22:32)
0

 
  صدرممنون حسین نے اسلام آباد میں بدھ کو یوم پاکستان پریڈ کی پروقار تقریب سے خطاب کرتے ہوئے نے دہشت گردی کے خلاف کارروائی اس کے منطقی انجام تک پہنچانے کے عزم کا اعادہ کیا ۔
انہوں نے کہا کہ شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں کے خلاف جاری آپریشن اپنے حتمی مرحلے میں داخل ہوچکا ہے جس کا مقصد ملک بھر سے لاقانونیت اور دہشت گرد ی کا خاتمہ کرنا ہے۔
ممنون حسین نے کہا کہ دشمن کو ملک کی طرف بری نگاہ ڈالنے نہیں دی جائے گی اور ہماری مسلح افواج دشمن کے مذموم عزائم کو اپنے آئینی ہاتھوں سے ناکام بنانے کے لئے پوری طرح لیس ہے۔
انہوں نے کہا کہ ہمارے ہتھیار اور اسلحہ صرف ملکی دفاع اورسلامتی کے لئے ہیں ۔
کبھی ہتھیاروں کی دوڑ میںشامل نہیں ہوئے تاہم ملکی دفاع کے حوالے سے مسلح افواج کی تمام ضروریات پوری کی جائیں گی۔
صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان ایک امن پسند ملک ہے اور ہماری فوج نے اقوام متحدہ کے قیام امن کے مشنوں کے لئے خدمات انجام دی ہیں انہوں نے کہا کہ پاکستان دنیا سے تنازعات اور دہشت گردی کے خاتمے کیلئے اپنا کردار ادا کرتا رہے گا۔
ممنون حسین نے کہا کہ کشمیرپاکستان کی شہ رگ ہے اور ہم اس دیرینہ تنازعے کا پرامن حل چاہتے ہیں۔ انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ پاکستان حق خودارادیت کے حصول کی جدوجہد میں کشمیری عوام کی اخلاقی، سیاسی اور سفارتی حمایت جاری رکھے گا۔
انہوں نے کہا کہ ملک کی ترقی اور خوشحالی کا سفر شروع ہوگیا ہے اور وہ دن دور نہیں جب پاکستان عالمی افق پرایک ترقی یافتہ ملک کے طور پر ابھرے گا۔
تقریب میں وزیراعظم نوازشریف ، وزرا، ارکان پارلیمنٹ ،سفارتکاروں ، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی جنرل راشد محمود ، تینوں مسلح افواج کے سربراہان اورمعاشرے کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد کی کثیر تعداد نے بھی شرکت کی۔
یوم پاکستان پریڈ کی پروقار تقریب کا آغاز پاک فضائیہ اور پاک بحریہ کے لڑاکا طیاروں کے شاندار فضائی مظاہرے سے ہوا جس کی قیادت پاک فضائیہ کے سربراہ ائیرچیف مارشل سہیل امان کررہے تھے۔
پاک فوج ، پاک بحریہ، پاک فضائیہ، رینجرز ، پولیس ، ایس ایس جی اور گرل گائیڈز کے دستے صدر کو سلامی دیتے ہوئے چبوترے کے سامنے سے گزرے۔
ٹینک، راکٹ لانچر ملک میں تیار کئے گئے مختصر اور طویل فاصلے تک مارکرنے والے میزائل ، ریڈار، اوربغیرپائلٹ جہاز سمیت دیگر دفاعی آلات پریڈ کے موقع پر دکھائے گئے۔
چاروں صوبوں ، آزادکشمیر اور گلگت بلتستان کی ثقافت پرمبنی فلوٹس بھی پریڈ کا حصہ تھے ۔
سپیشل سروسز گروپ کے چھاتہ برداروں نے قومی پرچم اور تینوں مسلح افواج کے پرچم تھام کر 10 ہزار فٹ کی بلندی سے چھلانگ لگائی۔
پریڈکے اختتام پر مختلف سکولوں کے طلباء نے ملی نغمے پیش کئے اس موقع پر صدر، وزیراعظم اوربری فوج کے سربراہ مختلف علاقائی ، لباس پہنے طلباء میں گھل مل گئے ۔