پاکستان نے اقوام متحدہ اور اسلامی تعاون تنظیم پر زور دیا ہے کہ وہ بحران کے حل کیلئے فعال اقدامات کریں۔

پاکستان یمن بحران کے جلد سیاسی حل کا خواہاں
23 اپریل 2015 (17:14)
0

دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ پاکستان یمن کے بحران کا جلد سیاسی حل چاہتا ہے۔
جمعرات کے روز اسلام آباد میں اپنی ہفتہ وار نیوز بریفنگ میں دفتر خارجہ کی ترجمان تسنیم اسلم نے کہا کہ پاکستان نے اقوام متحدہ اور اسلامی تعاون تنظیم پر زور دیا ہے کہ وہ بحران کے حل کیلئے فعال اقدامات کریں۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان اس مسئلے پر سعودی عرب سمیت مختلف مسلمان ملکوں کے ساتھ رابطے میں ہے اور وزیراعظم نواز شریف کا سعودی عرب کا دورہ اس مقصد کے حصول کی کوششوں کا حصہ ہے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان یمن میں فضائی حملے روکنے سے متعلق سعودی عرب کے فیصلے کا خیرمقدم کرتا ہے پاکستان پرامید ہے کہ اس سے سیاسی عمل کا آغاز ہو گا اور استحکام آئے گا۔
تسنیم اسلم نے کہا کہ سعودی عرب قریبی دوست اور حقیقی بھائی ہے جو ہمیشہ ہر مشکل وقت میں پاکستان کے شانہ بشانہ کھڑا ہوا۔
منشیات سے بھری ایک پاکستانی کشتی پکڑے جانے سے متعلق بھارتی ذرائع ابلاغ کی اطلاعات کے بارے میں ترجمان نے کہا کہ نئی دلی میں ہمارے مشن نے بھارت سے کہا ہے کہ وہ اس کی تفصیلات فراہم کرے۔
ایک سوال پر ترجمان نے کہا کہ ہمارے پاس دولت اسلامیہ کی پاکستان میں موجودگی کے کوئی ٹھوس ثبوت نہیں ہیں تاہم ہم اس معاملے میں چوکس ہیں۔تمام ملکوں کو دہشت گردی کے خاتمے کے لئے تعاون کرنا چاہئیے۔
افغان سرزمین سے سرحد پار بڑھتے ہوئے حملوں کے بارے میں ترجمان نے کہا کہ دونوں ملک سرحدی انتظام بہتر بنانے کیلئے بات چیت کر رہے ہیں۔
ایران کے ساتھ تعلقات سے متعلق ترجمان نے کہا کہ دونوں ملک اپنے سیاسی روابط اور معاشی تعلقات کو فروغ دینے کی کوشش کر رہے ہیں۔