Tuesday, 23 October 2018, 06:09:23 am
پاکستان کی امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائے، وزیراعظم
September 23, 2018

وزیراعظم عمران خان نے کہاکہ پاکستان کی امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائے۔

اتوار کے تیسرے پہر لاہور میں سرکاری ملازمین سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ اگر بھارت دھمکی آمیز رویہ اختیار کے گا تو پوری پاکستانی قوم اس کے مقابلے کیلئے تیار ہوگی۔

وزیراعظم نے امید ظاہر کی کہ پاکستان کے بھارت سے تعلقات بہتری سے دونوں ملکوں کے عوام کی زندگیوں پر مثبت اثرات مرتب ہوں گے۔

عمران خان نے کہا کہ انہوں نے ملک میں سرمایہ کاری لانے کیلئے حال ہی میں سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کا دورہ کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر ملک میں نظام حکومت بہتر ہو جائے تو بھاری غیر ملکی سرمایہ کاری پاکستان آسکتی ہے۔

انہوں نے سول ملازمین پر زور دیا کہ وہ اس سلسلے میں اپنا کردار ادا کریں۔

عمران خان نے سول ملازمین کو یقین دلایاکہ ان کے کام میں کوئی سیاسی مداخلت نہیں ہوگی تاہم ان کی اولین ترجیح عوام کی خدمت ہونی چاہیے۔

وزیراعظم نے کہا کہ عام آدمی کو زیادہ سے زیادہ سہولتیں فراہم کرنے کیلئے ایک نظام وضع کیاجائے گا اور اس پر عملدرآمد کیلئے پولیس اور سول ملازمین کا اہم کردار ہوگا۔

انہوں نے کہاکہ نیا پاکستان کی پالیسی سب کیلئے انصاف اور مساوی سہولتوں پر مشتمل ہے۔

عمران خان نے کہا کہ عوام کی شکایات کے ازالے کیلئے وزیراعظم اور وزیراعلیٰ کے دفاتر میں شکایت سیل قائم کئے جائیں گے۔