کلبھوشن یادیو نے تسلیم کیا ہے کہ وہ پاکستان میں جاسوسی ، دہشت گردی اورتخریبی کارروائیوں میں ملوث ہے

22 جون 2017 (18:59)
0

بھارتی بحریہ کے افسر کلبھوشن یادیو نے جسے جاسوسی تخریبی سرگرمیوں اور دہشت گردی کے جرائم میں سزائے موت سنائی گئی ہے بری فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ سے رحم کی اپیل کی ہے ۔
فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق اپنی اپیل میں کلبھوشن یادیو نے تسلیم کیا ہے کہ وہ پاکستان میں جاسوسی ، دہشت گردی اورتخریبی کارروائیوں میں ملوث ہے
اپنے گھنائونے جرائم پرمعافی مانگتے ہوئے اس نے بری فوج کے سربراہ سے درخواست کی ہے کہ انسانی ہمدردی کی بنیاد پر اسے معاف کردیا جائے ۔
اس سے پہلے کمانڈر یادیو نے فوجی ایپلٹ عدالت میں اپیل کی تھی جومسترد کردی گئی ۔
قانون کے تحت وہ بری فوج کے سربراہ سے معافی کی اپیل کرسکتا ہے جواس نے کی اوراگر وہ مسترد کردی گئی تو وہ صدر پاکستان سے اپیل کرسکتا ہے۔
اس کی دوسری اعترافی ویڈیوبھی جاری کردی گئی ہے جس میں اس نے دہشت گردی اور جاسوسی کی کارروائیوں کو تسلیم کیا ہے تاکہ دنیا کو معلوم ہوسکے کہ بھارت پاکستان میں کن گھنائونی کارروائیوں میں ملوث رہا اور اسکے مذموم عزائم اب بھی جاری ہیں۔