یوکرینی دارالحکومت کے وسط میں جھڑپیں اس وقت شدت اختیار کرگئیں جب مظاہرین نے سیکورٹی فورسز پر پٹرول بم اور پتھر پھینکے جواب میں سیکورٹی فورسز نے بے ہوش کرنے والے بموں ، ربڑ کی گولیوں اور آنسو گیس کا استعمال کیا۔


 

22 جنوری 2014 (13:08)
0

روس نے اس صورتحال پر تشویش کا اظہار کیا ہے کہ یوکرین کے دارالحکومت کیف میں یورپی یونین کے حمایتی مظاہرین اور سیکورٹی فورسز کے درمیان پرتشدد جھڑپوں کو دوسرا روز گزرنے کے بعد وہاں صورتحال بے قابو ہوتی جارہی ہے۔



یوکرینی دارالحکومت کے وسط میں جھڑپیں اس وقت شدت اختیار کرگئیں جب مظاہرین نے سیکورٹی فورسز پر پٹرول بم اور پتھر پھینکے جواب میں سیکورٹی فورسز نے بے ہوش کرنے والے بموں ، ربڑ کی گولیوں اور آنسو گیس کا استعمال کیا۔



گزشتہ روز بھی صورتحال کشیدہ رہی جبکہ مظاہرین کو سیکورٹی فورسز کی جانب سے سخت مزاحمت کا سامنا ہے جس نے پارلیمنٹ جانے والی شاہراہ کو بند کررکھا ہے۔