Friday, 22 November 2019, 02:12:55 am
جموں وکشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کر کے بھارت نے اسے اپنی کالونی بنانے کی سازش کی ہے،صدر آزاد کشمیر
August 21, 2019

آزاد جموں وکشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے کہا ہے کہ جموں وکشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کر کے بھارت نے اسے اپنی کالونی بنانے کی سازش کی ہے۔

انہوں نے ریڈیو پاکستان کے خبروں اور حالات حاضرہ کے چینل کو ایک انٹرویو میں کہا کہ بھارت کا یہ اقدام اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں اور عالمی قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیری گزشتہ 72 سال سے اپنے حق خودارادیت کی جنگ لڑ رہے ہیں۔سردار مسعود خان نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے بارے میں عالمی ادارے کی سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس پاکستان کی عظیم سفارتی کامیابی ہے اور کشمیریوں کی آواز دنیا کے اعلیٰ ترین سفارتی فورم پر سنی گئی ہے۔آزاد کشمیر کے صدر نے یہ اجلاس بلانے میں عالمی برادری خصوصاً چین کے تعاون کی تعریف کی۔انہوں نے امریکہ، روس ، فرانس اور برطانیہ کے کردار کی بھی تعریف کی جنہوںنے سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس بلانے میں کوئی رکاوٹ پیدا نہیں کی۔حالیہ صورتحال میں اسلامی تعاون تنظیم کے کردار کے بارے میں ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ او آئی سی کے سیکرٹری جنرل نے کشمیر کے بارے میں پاکستان کے موقف کی حمایت میں کئی بیانات دیئے ہیں۔سردار مسعود خان نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں حالیہ بھارتی اقدامات کشمیری مسلمانوں پر حملے کے مترادف ہیں جن سے مودی حکومت کی ہندوو انتہا پسند ذہنیت کی عکاسی ہوتی ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارتی قابض فورسز کے ہاتھوں کشمیریوں کی نسل کشی روکنا ہماری اولین ترجیح ہے۔آزاد کشمیر کے صدر نے کشمیر کے نصب العین اور اس تنازعے کو موثر طور پر اجاگر کرنے پر ریڈیو پاکستان اور قومی اور بین الاقوامی ذرائع ابلاغ کی تعریف کی۔ریڈیو پاکستان کی ڈائریکٹر جنرل شہیرہ شاہد ، ڈائریکٹر نیوز عبدالہادی مایار اور کنٹرولر نیوز اینڈ کرنٹ افیئرز زہرہ عثمانی بھی اس موقع پر موجود تھیں۔