Tuesday, 25 June 2019, 11:30:45 am
حریت قیادت کی بھارت کے مختلف شہروں،ریاستوں میں کشمیریوں پر مسلسل حملوں کی شدید مذمت
February 21, 2019

فائل فوٹو۔

 مقبوضہ کشمیرمیں تحریک حریت جموں وکشمیر کے چیئرمین محمد اشرف صحرائی نے بھارتی صوبوں میں کشمیری طلباء اور تاجروں پرحملوں کو بھارت کیلئے اجتماعی شرمندگی قراردیاہے ۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار بھارت میں کشمیری طلباء کی گرفتاریوں اور تعلیمی اداروں سے بے دخلی کی اطلاعات پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کیا۔ اشرف صحرائی نے آج سرینگر میں جاری ایک بیان میںپھنسے ہوئے کشمیریوں کو پناہ اور خوراک فراہم کرنے پر بین الاقوامی فلاحی تنظیم خالصہ ایڈ، مقامی گوردواروں' سکھ برادری اور مقامی مسلمانوں کا شکریہ ادا کیا۔ حریت فورم کے چیئرمین میر واعظ عمر فاورق نے ایک بیان میں واضح کیاہے کہ کشمیر سے باہر جیلوں میں نظربند کشمیریوں کے اہلخانہ کو خاص طوپر بھارت کی جیل میں ایک پاکستانی قیدی کے قتل کے بعد انکی سلامتی سے متعلق شدید تشویش ہے ۔ادھر جموںریجن کی وادی چناب میں کشمیریوں اور مقامی مسلمانوں کو ہراساں کئے جانے کے خلاف احتجاج کیلئے مکمل ہڑتال کی گئی ۔ہڑتال کی اپیل انجمن اسلامیہ بھدروہ نے کی تھی جبکہ مختلف مذہبی اور سیاسی تنظیموں نے اس کی حمایت کی تھی ۔ کشمیریوںپر حملوں کے خلاف احتجاج کیلئے کل تاجر سرینگر کے تجارتی مرکز لال چوک اور اس سے ملحقہ علاقوں میں مکمل ہڑتال کریں گے ۔