Friday, 26 February 2021, 11:02:27 pm
بھارتی حکومت کا پاکستان کیخلاف شرانگیز پروپیگنڈاعالمی سطح پر بے نقاب ہوگیا،دفترخارجہ
January 21, 2021

 دفترخارجہ کے ترجمان زاہد حفیظ چوہدری نے بھارت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ من گھڑت الزامات کے تحت غیر قانونی طور پر نظر بند کئے گئے کشمیری رہنمائوں کو فوری طور پر رہا کرے۔
انہوں نے جمعرات کو تیسرے پہر اسلام آباد میں ہفتہ وار نیوز بریفنگ میں ایک سوال کے جواب میں کہا کہ کشمیری رہنمائوں کو بنیادی انسانی حقوق، بین الاقوامی کنونشنز اور عالمی قوانین کی کھلی خلاف ورزی کرتے ہوئے بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں وکشمیر اور بدنام زمانہ تہاڑ جیل سمیت بھارت کے دوسرے حصوں میں غیر قانونی طور پر نظر بند رکھا گیا ہے۔
ترجمان نے کہا کہ پاکستان حریت رہنما یاسین ملک کے خلاف بھارتی فضائیہ کے عملے کے چار ارکان کو فائرنگ کرکے ہلاک کرنے کے من گھڑت اور سیاسی فائدے کیلئے عائد کئے گئے الزامات کی شدید مذمت کرتا ہے۔
انہوں نے کہا کہ اس کیس کو دوبارہ کھولنے کے وقت سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ بی جے پی حکومت مقبوضہ کشمیر پر جاری غیر قانونی تسلط کے خلاف مزاحمت کی پاداش میں حریت قیادت کو پابند سلاسل رکھنا چاہتی ہے۔
یاسین ملک کی صحت پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے زائد حفیظ چوہدری نے کہا کہ کشمیری قیادت پر ان کے سیاسی نظریات کی وجہ سے قید وبند کی صعوبتیں اور ظلم وتشدد اور غیر قانونی تسلط کے خلاف ان کی جدوجہد کو دبانا بھارتی حکومت کی انتہا پسندانہ ذہنیت کا واضح ثبوت ہے۔
انہوں نے عالمی برادری، خصوصا اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی تنظیموں پر زور دیا کہ وہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں اور کشمیریوں کو غیر قانونی طور پر نظر بند رکھنے کے واقعات کا نوٹس لیں۔

Error
Whoops, looks like something went wrong.