فاٹا میں ہونہار اور مستحق طلباء میں وظائف اور مالی مدد دینے کیلئے سالانہ24 کروڑ 80لاکھ روپے خرچ کئے گئے ہیں۔

حکومت فاٹا میں تعلیمی اصلاحات کیلئے مربوط منصوبے پر عمل پیرا
20 مئی 2017 (12:10)
0

حکومت قبائلی علاقوں میں تعلیمی اصلاحات کیلئے ٹھوس منصوبے پر عمل کر رہی ہے۔سرکاری ذرائع کے مطابق فاٹا میں ہونہار اور مستحق طلباء میں وظائف اور مالی مدد دینے کیلئے سالانہ چوبیس کروڑ اسی لاکھ روپے خرچ کئے گئے ہیں۔علاقے کے لوگوں کی اعلیٰ تعلیم تک آسان رسائی کیلئے فاٹا میں یونیورسٹی قائم کی گئی ہے۔

بچوں کو اپنے علاقوں میں ہی معیاری تعلیم فراہم کرنے کیلئے قبائلی علاقوں میں کئی کیڈٹ کالج بنائے گئے ہیں۔فاٹا میں جلد سرکاری اور نجی شراکت داری کے تحت آرمی پبلک سکولز ، پشاور ماڈل سکولز اور بیکن ہاوس سکولز بھی کھولے جائیں گے۔