وزیر داخلہ نے کہا کہ ملک سے دہشت گردی کا خاتمہ تمام فریقوں کی مشترکہ ذمہ داری ہے۔

سینیٹ،کالعدم دہشت گرد اور فرقہ ورانہ تنظیموں کے گرد گھیرا تنگ کر دیا گیا
20 مارچ 2017 (17:40)
0

سینیٹ کو پیر کے روز بتایاگیا کہ ملک میں امن کی بحالی کیلئے کالعدم دہشتگرد اور فرقہ وارانہ تنظیموں کے گرد گھیرا تنگ کردیا گیا ہے۔
وزیرداخلہ چوہدری نثار علی خان نے سحر کامران اور دیگر کی طرف سے پیش کردہ ایک تحریک پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ ملک سے دہشتگردی کا خاتمہ تمام فریقوں کی مشترکہ ذمہ داری ہے اور انہیں ملک کو امن کا گہوارہ بنانے کیلئے اپنا کردار ادا کرنا چاہئے۔
انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کے خاتمے کی تمام کوششیں سیاسی محرکات سے بالاتر ہونی چاہئیں۔
وزیرداخلہ نے کہا کہ دہشتگرد تنظیموں کو کسی قیمت پر ملک میں کام نہیں کرنے دیاجائے گا اور آپریشن ضرب عضب کے دوران ان کے ٹھکانے تباہ کردیئے گئے ہیں۔

بین الصوبائی رابطے کے وزیر ریاض حسین پیرزادہ نے ایوان کو بتایا کہ حکومت ملک میں کھیلوں کی ترقی کیلئے بھرپور کوشش کررہی ہے۔

انہوں نے کلثوم پروین کی طرف سے پاکستان سپورٹس بورڈ کے کردار کے حوالے سے پیش کی گئی ایک قرار پر بحث سمیٹتے ہوئے کہا کہ کھیلوں کے شعبے میں ہر ممکن کوشش کے ذریعے بہتری لائی جائے گی۔
قانون وانصاف کے وزیر زاہد حامد نے ایوان کو بتایا کہ گزشتہ چار برس کے دوران چھتیس ارب روپے مالیت کی سمگل شدہ اشیاء قبضے میں لی گئیں ہیں۔
انہوں نے یہ بات الیکٹرونکس ، ٹیکسٹائل مصنوعات اور دیگر اشیا کی سمگلنگ میں مسلسل اضافے سے پیدا ہونے والی صورتحال کے بارے میں محسن عزیز کی طرف سے پیش کی گئی ایک تحریک پر بحث سمیٹے ہوئے کہی۔
وفاقی وزیر نے کہا کہ 2012-13 میں پانچ ارب تیس کروڑ روپے مالیت کی اشیاء اور منشیات ،2013-14 میں سات ارب چالیس کروڑ روپے،2014-15 میں نو ارب پچاس کروڑ روپے اور 2015-16ء میں چودہ ارب تیس کروڑ روپے کی اشیاء اور منشیات پکڑی گئیں۔
انہوں نے کہا کہ حکومت نے پاک افغان سرحد سے سمگلنگ روکنے کیلئے سخت لائحہ عمل تیار کیا ہے۔
پیٹرولیم اور قدرتی وسائل کے وزیر شاہد خاقان عباسی نے ایوان کو بتایا کہ ملک میں ساڑھے سولہ ہزار میٹرک ٹن فرنس آئل کا ذخیرہ موجود ہے اوراس کا استعمال سات ہزار میٹرک ٹن ہے ۔
تاج حیدر کی طرف سے پیش کئے گئے عوامی اہمیت کے ایک نکتہ کے جواب میں انہوں نے کہاکہ اس سلسلے میں بحران کا کوئی خطرہ نہیں ہے اور طلب کے مطابق ایندھن کی فراہمی کویقینی بنایاجائے گا ۔
ایوان کا اجلاس اب کل دوپہر تین بجے ہوگا ۔


comments powered by Disqus