20 جون 2014 (20:40)
0

اسلامی تعاون کی تنظیم نے فرقہ وارانہ پالیسیوں کے خاتمے کیلئے اتحاد پیدا کرنے کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔
وزرائے خارجہ کی کونسل کے دو روزہ اجلاس کے بعد جاری اعلامیے میں تنظیم نے مذہب او رمسلک کی آڑ میں انتہاپسندی اور مختلف اسلامی فرقوںکے پیروکاروں پر بے اعتقاد ہونے کے فتوے لگانے کے مسائل سے نمٹنے پر زور دیا۔
تنظیم نے کہا کہ مشرق وسطی امن عمل کے تعطل میں اسرائیل مکمل طور پر ذمہ دارہے اور وہ القدس کو یہودی شہر بنانے پر مصر ہیں ۔
او آئی سی وزراء نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرارداد نمبر دو ہزار ایک سو انتالیس پر عملدرآمد میں ناکامی پر شامی حکومت کی مذمت کی ہے۔
کسی رکاوٹ کے بغیر شامی باشندوں کو انسانی بنیادوں پر امداد کی فراہمی کا تقاضاکرتی ہے۔
اعلامیے میں یمن ' مالی' افغانستان ' جموں وکشمیر کے عوام ' ترک قبرصی اورکوسوو میں ان کی خواہشات کے مطابق پرامن اور محفوظ زندگی کے لئے یکجہتی کا اظہار کیا گیا۔