Saturday, 26 May 2018, 09:10:34 am
میر واعظ کا آصفہ کی آبروریزی اورقتل کے مجرموں کو کڑی سزا دینے کا مطالبہ
April 20, 2018

مقبوضہ کشمیر میں حریت فورم کے چیئرمین میر واعظ عمر فاروق نے آٹھ سالہ آصفہ کی آبروریزی اور قتل کے مجرموں کو کڑی سز ا دینے اور بھارتی فورسز کی طرف سے1990سے کیے جانے والے عصمت دری کے تمام واقعات کی دوبارہ تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔میر واعظ عمر فاروق نے  جمعہ کے روز جامع مسجد سرینگر میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت جب پوری دنیا میں آصفہ کے المناک واقعے پر غم و غصہ پایاجاتاہے اور اسکے انصاف کا مطالبہ کیا جا رہا ہے کشمیری آبروریزی کا شکار سینکڑوں خواتین کو انصاف کی فراہمی کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ بھارتی فوجیوں نے کشمیریوں کے جذبہ آزادی کو دبانے اورانہیں مرعوب کرنے کیلئے کنن پوشپورہ ، چک سعدپورہ، پزی پورہ، پالہ پورہ، شوپیاں، بدسگام، بالی پورہ اور دیگر علاقوں میںآبروریزی کی بہیمانہ کاروائیاں کی ہیں۔ انہوںنے مطالبہ کیاکہ ان تمام واقعات کی غیر جانبدار ایجنسیوں کے ذریعے تحقیقات کرا کر مجرموں کو سزا دی جائے۔سید علی گیلانی ، میر واعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل مشترکہ مزاحمتی قیادت نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں بھارتی فورسز کی طرف سے مقبوضہ علاقے میں انسانی حقوق کی بڑھتی ہوئی خلاف ورزیوں کی شدید مذمت کی۔ حریت رہنمائوں مختار احمد وازہ اور جاویداحمد میر نے اسلام آباد ، سرینگر اور بڈگام کے علاقوں میںعوامی اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے مقبوضہ کشمیرمیںبھارتی مظالم پر عالمی برادری کی خاموشی پر افسوس ظاہر کیا۔ادھر جموں ریجن کے علاقوں کشتواڑ ، بھدروہ اور رام بن میں مسلمانوں نے ننھی آصفہ کی بے حرمتی اور قتل کے مقدمے کی تیزتر سماعت کے مطالبے کے حق میں ہڑتال کی ۔ بھارتی پولیس نے جموںوکشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک کو آج سرینگر میں گھر پر چھاپے کے دوران گرفتار کر کے کوٹھی باغ تھانے میں نظر بند کر دیا۔