بورڈ نے ڈاکٹر عاصم حسین ، سوئی سدرن کے سابق منیجنگ ڈائریکٹروں عظیم صدیقی، ظہیراحمد صدیقی ، شعیب وارثی، خالد رحمان اور دیگر کے خلاف تحقیقات کرانے کا بھی فیصلہ کیا ہے ۔

نیب ایگزیکٹو بورڈ کا ڈاکٹر عاصم کیخلاف بدعنوانی کا مقدمہ درج کرنے کا فیصلہ
19 فروری 2016 (19:22)
0

قومی احتساب بیورو کے ایگزیکٹو بورڈ نے پیٹرولیم کے سابق وزیر ڈاکٹر عاصم حسین کے خلاف بدعنوانی کا مقدمہ درج کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔
اس کا اجلاس جمعہ کے روز اسلام آباد میں چیئرمین قمر زمان چوہدری کی صدارت میں ہوا ۔
ڈاکٹر عاصم اور دیگر ملزمان پر فراڈ کے ذریعے زمین کی الاٹمنٹ اور غیرقانونی طورپر زمینوں پرقبضہ، قدرتی گیس کی غیرمنصفانہ تقسیم اور منی لانڈرنگ کے الزامات ہیں جس سے قومی خزانے کو بھاری نقصان پہنچا ہے ۔
بورڈ نے ڈاکٹر عاصم حسین ، سوئی سدرن کے سابق منیجنگ ڈائریکٹروں عظیم صدیقی، ظہیراحمد صدیقی ، شعیب وارثی، خالد رحمان اور دیگر کے خلاف تحقیقات کرانے کا بھی فیصلہ کیا ہے ۔
اس کیس میں ملزمان پرسوئی سدرن اور او جی ڈی سی ایل کے فنڈز میں بے ضابطگیاں کرنے کا الزام ہے جس سے قومی خزانے کو دس ارب روپے کا نقصان پہنچا ۔
ایگزیکٹو بورڈ نے اس سلسلے میں تین کیسوں کی تحقیقات کافیصلہ کیا۔