یہ تصاویر یو ایس ایڈ کے ایک تصویری مقابلہ میں جمع کرائی گئی تھیں جس میں14 سے 20سال کی عمر کے پاکستانی نوجوانوں نے حصہ لیا

یو ایس ایڈ کے تحت پاکستانی نوجوانوں کی تصاویر کی نمائش
18 ستمبر 2014 (19:15)
0

امریکی ادارہ برائے بین الاقوامی ترقی یوایس ایڈ کے زیر اہتمام جمعرات کو \"کچھ خاص گیلری \"میں ایک تصویر ی نمائش کا افتتاح ہوا جس میں پیش کی جانے والی تصاویر میں یو ایس ایڈ کے ملک بھر میں ہونے والے کام کو اجاگر کیا گیا۔ یہ تصاویر یو ایس ایڈ کے ایک تصویری مقابلہ میں جمع کرائی گئی تھیں جس میں14 سے 20سال کی عمر کے پاکستانی نوجوانوں نے حصہ لیا، نمائش کا سلسلہ21 ستمبر تک جاری رہے گا۔
اس سال کے اوائل میں منعقد ہونے والے تصویری مقابلے کے تحت پاکستان بھر میں یو ایس ایڈ کے کسی منصوبے کی تصویریں درکار تھیں۔ اس مقابلے میں پاکستان بھر سے400 سے زائد شرکا نے تصاویر پیش کیں۔
اس مقابلے میں شریک نوجوان فوٹو گرافرز کی کھینچی گئی تصاویر کے علاوہ بہت سی تصاویرایسڈ سروائور فاونڈیشن (اے ایس ایف)کے تحت تیزاب سے جھلس جانے والے افراد کی تصاویر بھی شامل تھیں۔یو ایس ایڈ کی مالی معاونت کی بدولت اے ایس ایف تربیت، کیمرے اور دیگر سامان تیزاب کے حملوں کے دوران جھلس جانے والے افراد کو مہیا کرتی ہے۔یہ منصوبہ یو ایس ایڈ کے صنفی مساوات پروگرام کا حصہ ہے، اوراس کے تحت ملک بھر سے تیزاب کے حملوں کے دوران جھلس جانے والے افرادکی بحالی کے پروگرام کے تحت فوٹو گرافی میں صلاحیتیں نکھارنے کا بندوبست کیا جاتا ہے۔ان تصاویر کی فروخت کے ذریعے تیزاب حملوں کے متاثرین کو نا صرف روزی کمانے میں مدد ملتی ہے بلکہ انہیں پیشہ ور فوٹو گرافر بنانے میں بھی مدد ملتی ہے۔
یو ایس ایڈ کے مشن ڈائریکٹر گریگ گوٹلیب نے نمائش کی افتتاحی تقریب سے خطاب کے دوران کہا کہ نمائش میں رکھی گئی تصاویر حقیقی پاکستان کی عکاسی کرتی ہیں۔خوبصورت سرزمین اور لوگ جن کے پاس مضبوط دل اور لامحدود صلاحیتیں ہیں۔