18 ستمبر 2014 (20:50)
0

نامور مذہبی سکالر اور اسلامی نظریاتی کونسل کے رکن محمد حنیف جالندھری نے تحریک انصاف اورعوامی کی طرف سے وزیراعظم کے استعفیٰ کے مطالبے کو نامناسب اور غیر آئینی قراردیاہے ۔
اے پی پی سے باتیں کرتے ہوئے اُنہوں نے کہا کہ اس سے ملک میں سیاسی عدم استحکام پید اہوگا۔
محمد حنیف جالندھری نے کہا کہ یہ انتہائی نامناسب بات ہے کہ لوگ' وفاقی دارالحکومت میں اکٹھے ہوکر وزیراعظم سے استعفیٰ کا مطالبہ کرنا شروع کردیں ۔
اُنہوں نے کہا کہ اس بحران کا واحد حل مذاکرات ہیں ۔ اُنہوں نے حکومت اور دھرنا دینے والی جماعتوں پر زوردیا کہ معاملے کا حل تلاش کرنے کیلئے خلوص اور سنجیدگی سے بات چیت کی جائے ۔
اُنہوں نے کہا کہ پاکستان عوامی تحریک کے دھرنے میں اکثریت منہاج القرآن کے سکولوں کے طلبہ ،ا ن کے والدین ، ملازمین اور رشتے داروں کی ہے ۔