سیاسی کارکنوں نے انسانی حقوق کے ادارے کے خلاف مظاہرے کیے اور اس پر ریاست کے خلاف نفرت کے جذبات ابھارنے کا الزام لگایا۔

ایمنسٹی انٹرنیشنل نے عملے کو لاحق سیکورٹی خدشات کے باعث بھارت میں اپنے دفاتر بند کر دیئے
18 اگست 2016 (00:23)
0

ایمنسٹی انٹرنیشنل نے اپنے عملے کو لاحق سیکورٹی خدشات کے باعث بھارت میں اپنے دفاتر بند کر دیئے ہیںاور اپنی سرگرمیاں معطل کر دی ہیں۔سیاسی کارکنوں نے انسانی حقوق کے ادارے کے خلاف مظاہرے کیے اور اس پر ریاست کے خلاف نفرت کے جذبات ابھارنے کا الزام لگایا۔تاہم ادارے نے یہ الزامات بے بنیاد قرار دیتے ہوئے مسترد کر دیئے۔
ایمنسٹی انٹرنیشنل  نے کہا کہ بھارتی حکومت جموں و کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے شکار خاندانوں کو آواز نہیں اٹھانے دے رہی اور سول سوسائٹی کے اداروں کو ان خاندانوں کو انصاف تک رسائی کا آئینی حق دینے میں معاونت سے بھی روکا جارہا ہے۔انسانی حقوق کا گروپ کئی سال سے اس امر یکی نشاندہی کررہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز ایک متنازعہ قانون کے ذریعے شہریوں کے حقوق پامال کررہی ہیں اس قانون کے تحت فورسز کو لوگوں کی تلاشی ' گرفتاری یا انہیں گولی مار دینے کے بے لگام اختیارات حاصل ہیں۔