متحدہ قومی موومنٹ کے رکن قومی اسمبلی پرفائرنگ کے واقعے کی تحقیقات کیلئے چار رکنی کمیٹی تشکیل دے دی گئی۔

 رشید گوڈیل کار پر فائرنگ سے زخمی،ڈرائیور جاں بحق
18 اگست 2015 (13:04)
0

کراچی کے علاقے بہادرآباد میں منگل کو متحدہ قومی موومنٹ کے رہنماء رشید گوڈیل کی کار پر فائرنگ کی گئی جس کے نتیجے میں رشید گوڈیل شدید زخمی جبکہ ان کا ڈرائیور جاں بحق ہوگیا۔
رشید گوڈیل کو تشویشناک حالت میں لیاقت نیشنل ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ ہسپتال ذرائع نے بتایا کہ ان کی گردن ، جبڑے اور سینے میں پانچ گولیاں لگی ہیں۔

انہیں آپریشن کے بعد انتہائی نگہداشت پر منتقل کر دیا گیا ہے اور انہیں مصنوعی طور پر سانس دیا جا رہا ہے۔  صدر ممنون حسین \\\'وزیراعظم نواز شریف اوروزیراطلاعات پرویزرشید نے رشید گوڈیل پر دہشت گردی کے حملے کی مذمت کی ہے۔ اپنے پیغامات میں انہوں نے ان کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی ہے۔  وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے انسپکٹر جنرل پولیس سے رپورٹ طلب کی ہے۔

ایم کیوایم کے سینئر رہنما حیدرعباس رضوی نے کہا ہے کہ رشید گوڈیل کی حالت بہتر ہے مگر ڈاکٹروں نے کہا ہے کہ ان کیلئے اگلے اڑتالیس گھنٹے بڑے اہم ہیں۔  کراچی میں صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ایم کیوایم نے حکومت سے واقعے کی تحقیقات جلد کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

متحدہ قومی موومنٹ کے رکن قومی اسمبلی رشید گوڈیل پرفائرنگ کے واقعے کی تحقیقات کیلئے چار رکنی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔ ڈی آئی جی منیر شیخ کمیٹی کے سربراہ ہوںگے جبکہ کمیٹی کے ارکان میں ایس ایس پی ایسٹ جاوید جسکانی ، ایس ایس پی انویسٹی گیشن ذوالفقارمہر اور ایس ایس پی ایس آئی یو فاروق اعوان شامل ہیں۔

پاکستان رینجرز سندھ نے بھی ایم کیوایم کے رہنما رشید گوڈیل پرقاتلانہ حملے کی شدید مذمت کی ہے۔  رینجرز کے ایک ترجمان نے کہا کہ عوام اس حملے کے ملزموں کے بارے میں کسی بھی قسم کی اطلاع ہیلپ لائن 1101 پر دے سکتے ہیں۔

متحدہ قومی موومنٹ کے رکن قومی اسمبلی رشید گوڈیل پرفائرنگ کے واقعے کی تحقیقات کیلئے چار رکنی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے ۔
ڈی آئی جی منیر شیخ کمیٹی کے سربراہ ہوںگے جبکہ کمیٹی کے ارکان میں ایس ایس پی ایسٹ جاوید جسکانی ، ایس ایس پی انویسٹی گیشن ذوالفقارمہر اور ایس ایس پی ایس آئی یو فاروق اعوان شامل ہیں ۔