File Photo

اقوام متحدہ کے ہائی کمیشن نے عارضی پناہ گاہوں کیلئے فاٹاکے قدرتی آفات سے نمٹنے کے ادارے کوسامان مہیا کیا
17 مئی 2017 (17:04)
0

پناہ گزینوں کے بارے میں اقوام متحدہ کے ہائی کمیشن نے آج پشاور میں ایک تقریب سے جنوبی وزیرستان ایجنسی کے عارضی طور پر بے گھر افراد کیلئے پناہ گاہیں بنانے کا سامان فاٹا کے قدرتی آفات سے نمٹنے کے ادارے کے حوالے کیا ۔
پناہ گاہیں بنانے کے سامان میں چار ہزار خیمے ،آٹھ ہزار پلاسٹک شیٹس اورچار ہزار ریلیف اشیا کی کیٹس شامل ہیں۔
اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے قدرتی آفات سے نمٹنے کے فاٹا کے ادارے کے ڈائریکٹر جنرل محمد خالد نے کہاکہ 94 فیصد عارضی طور پر بے گھر افراد اپنے علاقوں کوواپس چلے گئے ہیں انہوںنے کہا کہ باقی رہ جانے والے 49 ہزار خاندان بہت جلد اپنے گھروں کو واپس جائیں گے۔
اقوام متحدہ کے پناہ گزینوں کے بارے میں ہائی کمیشن کے کنٹری ڈائریکٹر Indrika Ratwatte نے بتایاکہ بے گھر افراد کی مدد کیلئے بیس کروڑ ڈالر فراہم کئے گئے ہیں۔کنٹری ڈائریکٹر نے بے گھر افراد کی باوقار انداز میں واپسی کو یقینی بنانے کیلئے حکومت کے عزم کو سراہا۔