امریکہ ،چین،جاپان اور بحرین کی لعل شہباز قلندر کے مزار پر خودکش حملے میں انسانی جانوں کے ضیاع پر اظہار افسوس۔

 عالمی برادری کی سانحہ سیہون شریف کی شدید مذمت
17 فروری 2017 (17:53)
0

پاکستان کے لئے امریکی سفیر ڈیوڈ ہیل نے لال شہباز قلندر کے مزار پر ہونے والی دہشت گردی میں قیمتی جانوں کے ضیاع پر دکھ کا اظہار کیا ہے۔
کراچی میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ افسوسناک سانحہ عالمی برادری کو یاد دلاتا ہے کہ انہیں ایسے جرائم کے مرتکب عناصر کے خلاف متحد ہونا ہوگا۔

  چین نے سیہون شریف کی درگاہ پر دہشت گردی کے حملے کی شدید مذمت کی ہے اور دہشت گردی اور انتہا پسندی کی لعنت کے خلاف پاکستان کی معاونت کی پیشکش کی ہے۔

بیجنگ میں پریس بریفنگ کے دوران چین کی وزارت خارجہ کے ترجمانGENG SHUANG نے کہا کہ چین کواس خودکش دھماکے میں ہونے والے بھاری جانی نقصان پر بہت دکھ ہے۔
ترجمان نے کہا کہ چین ہر قسم اور ہر سطح کی دہشت گردی کی مخالفت کرتاہے۔
چین دہشت گردی کے خلاف جنگ ، قومی سلامتی کے استحکام اور عوامی تحفظ کیلئے پاکستان کی کوششوں کی حمایت جاری رکھے گا۔

جاپان اور بحرین نے سیہون خودکش حملے کی شدید مذمت کی ہے۔
جاپان کی وزارت خارجہ کے پریس سیکرٹری نے ایک بیان میں ہر قسم کی دہشت گردی کی شدید مذمت کی ہے۔

روس کے صدر ولادی میرپیوٹن نے پاکستان میں دہشت گردوں کے حملے میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے رنج وغم کا اظہارکیا ہے ۔
صدر اور وزیراعظم پاکستان کے نام تعزیتی پیغام میں آج انہوں نے کہاکہ اس بہیمانہ جرم کا کوئی جواز نہیں ہوسکتا۔
انہوں نے امیدظاہر کی کہ حملے میں ملوث عناصر کو قرارواقعی سزا دی جائے گی۔
انہوں نے کہاکہ ان کا ملک انسداد دہشت گردی کے شعبے میں متفقہ باہمی تعاون کومستحکم کرنے اوراس حوالے سے وسیع تر عالمی کوششوں کے عزم کا اعادہ کرتا ہے۔
ولادی میرپیوٹن نے دھماکے میں جاں بحق ہونے والوں کے اہل خانہ اور عزیز واقارب سے بھی ہمدردی ظاہرکی اورزخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کی۔
ادھربحرین کے دفترخارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ بحرین کی حکومت اس المناک سانحے پر پاکستان کی حکومت اور عوام کے ساتھ کھڑی ہے۔