ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ عالمی برادری کشمیر کو متنازعہ علاقہ تصور کرتی ہے۔

پاکستان بھارت کیساتھ تصفیہ طلب مسائل کے مذاکراتی حل کا خواہاں
17 اگست 2016 (18:13)
0

دفترخارجہ کے ترجمان نفیس زکریا نے کہاہے کہ پاکستان بھارت سے تمام تصفیہ طلب مسائل مذاکرات کے ذریعے حل کرناچاہتاہے۔پی ٹی وی کے ایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ عالمی برادری کشمیرکو ایک متنازعہ علاقہ تصور کرتی ہے۔انہو ں نے کہاکہ اسی طرح کشمیر کے بارے میں اقوام متحدہ کی قراردادوں پرعملدرآمد ہونا ابھی باقی ہے۔
نفیس زکریا نے کہاکہ بھارتی وزیراعظم کے بیان سے ظاہر ہوتاہے کہ بھارت بلوچستان میں تخریبی کارروائیوں میں ملوث ہے۔انہوں نے نریندرمودی کے بیان کو پاکستان کے اندرونی معاملات میں مداخلت قراردیا جس کے ذریعے انہوں نے عالمی برادری کی توجہ مسئلہ کشمیر سے ہٹانے کی کوشش کی۔انہوں نے کہاکہ بھارتی جاسوس کلبھوسن یادیو نے بھی صوبے میں دہشتگردی کی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کااعتراف کیاہے۔
ترجمان نے کہاکہ عالمی برادری نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کے مظالم کی شدیدمذمت کی ہے۔ترجمان نے کہاکہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل نے بھی مقبوضہ کشمیرکی صورتحال پرتشویش ظاہرکی ہے جہاں بھارتی فوج ریاستی دہشتگردی کی کارروائیاں کررہی ہے۔
نفیس زکریانے عالمی برادری پرزوردیا کہ وہ بھارت پردبائوڈالے اورمسئلہ کشمیر کے بارے میں اقوام متحدہ کی قراردادوں پرعملدرآمدیقینی بنائے۔