جنوبی ایشیا کے لئے امریکہ کی سابق معاون وزیر خارجہ رابن رافیل نے کہا کہ پاکستان میں فوری انتخابات کا کوئی امکان نہیں

گزشتہ آٹھ سال کے دوران پاکستان میں جمہوریت مضبوط ہوئی ہے: سیمینار
17 اگست 2016 (15:47)
0

واشنگٹن میں ایک سیمینار میں مقررین نے کہا ہے کہ گزشتہ آٹھ سال کے دوران پاکستان میں جمہوریت مضبوط ہوئی ہے۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے جنوبی ایشیا کے لئے امریکہ کی سابق معاون وزیر خارجہ رابن رافیل نے کہا کہ پاکستان میں فوری انتخابات کا کوئی امکان نہیں ہے، انتخابات شیڈول کے مطابق 2018 میں ہی ہوں گے۔
انہوںنے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کے دھرنے کے باوجود جمہوریت محفوظ رہی اور حکومت پہلے سے زیادہ مستحکم ہوئی۔
پاکستان کے بارے میں سینئر تجزیہ کار مارون وینبام نے کہا کہ 2013 میں پاکستان پیپلز پارٹی سے پاکستان مسلم لیگ(ن) کو اقتدار کی منتقلی ایک اہم تبدیلی تھی جس نے ملک میں وقت سے پہلے حکومت کی تبدیلی کے امکانات بڑی حد تک ختم کردئیے ہیں۔
انہوںنے کہا کہ یہ تبدیلی دونوں جماعتوں کی طرف سے جمہوریت کو پٹڑی سے اتارنے کی غلطی نہ کرنے کے باعث ہوئی۔
اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے پاکستانی صحافی رضا رومی نے کہا کہ جمہوریت مضبوط ہوئی ہے اور اب غیر آئینی طریقے سے حکومت گرانا مشکل ہوگا۔
دوسرے مقررین نے کہا کہ پاکستان کے آئین میں حالیہ ترامیم سے صوبوں کو مزید اختیارات مل گئے ہیں اور پہلے سے بہتر نظام قائم ہوا ہے۔