file photo

مقبوضہ کشمیر , بھارتی فوجیوں کی فائرنگ سے 100 سے زائد طالب علم زخمی
17 اپریل 2017 (19:26)
0

پورے مقبوضہ کشمیرمیں تقریبا تمام تعلیمی اداروںکے ہزاروں طلباء نے سڑکوں پر نکل کر احتجاجی مظاہرے کئے ۔ مظاہرین پر بھارتی فورسز کی طرف سے طاقت کے وحشیانہ استعمال سے 100کےقریب طلبہ و طالبات اور ایک صحافی زخمی ہوگیا۔
مظاہروں کی اپیل کشمیر یونیورسٹی سٹوڈنٹس یونین نے بھارتی فوجیوںکی طرف سے ہفتہ کو پلوامہ ڈگری کالج میں طلبہ پر بدترین تشدد کے خلاف کی تھی۔
طلباء نے بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں نعرے بلند کرتے ہوئے سرینگر ، بڈگام ، بارہمولہ ، شوپیاں، کلگام ، گاندربل ، کپواڑہ ، پلوامہ ، اسلام آباد اور بانڈی پورہ اضلاع کی تمام چھوٹی اور بڑی سڑکوں پر مارچ کیا ۔
کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے سرینگر میں ایک بیان میں مقبوضہ علاقے میں کشمیریوں کو درپیش مشکلا ت اجاگر کرنے میں ناکامی پر انسانی حقوق کی تنظیموں پر تنقید کی ہے کیونکہ ہر گزرتے دن کے ساتھ نوجوانوں پر تشدد کرکے انہیں شہید کیاجارہا ہے۔
ادھر بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں ایک شہری سجاد احمد شیخ کے قتل کے خلاف آج سرینگر کے علاقے بٹہ مالو میں مسلسل تیسرے روز مکمل ہڑتال کی گئی ۔


comments powered by Disqus