دوہزار پندرہ میں سیلاب کے باعث بند ہو جانے والے اس بجلی گھر کی دوسال میں تعمیر نو کی جائے گی جس پرتقریباً ایک ارب روپے لاگت آئے گی۔

خیبرپختونخوا حکومت کا چترال میں ریشون پن بجلی گھر کو بحال کرنے کا فیصلہ
17 اپریل 2017 (16:10)
0

خیبرپختونخوا حکومت نے ضلع چترال میں ریشون پن بجلی گھر کو بحال کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ خیبرپختونخوا کے توانائی کے ترقیاتی ادارے کے ترجمان نے ریڈیو پاکستان کے پشاور کے نمائندے کو بتایا کہ2015میں سیلاب کے باعث بند ہو جانے والے اس بجلی گھر کی دوسال میں تعمیر نو کی جائے گی جس پرتقریباً ایک ارب روپے لاگت آئے گی۔
بجلی گھر سے چار اعشاریہ دو میگاواٹ بجلی پیدا ہوگی جو ضلع چترال کے 70 دیہات کو فراہم کی جائے گی۔


comments powered by Disqus