نیب کا ایف بی آر کے سابق افسروں کیخلاف بدعنوانی کی تحقیقات کا فیصلہ
16 جون 2015 (19:32)
0

قومی احتساب بیورو نے فیڈرل بورڈ آف ریونیو کے سابق سربراہوں کے خلاف بدعنوانی اور اختیارات کے ناجائز استعمال کے الزامات کی تحقیقات شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ فیصلہ منگل کو اسلام آباد میں چیئرمین نیب قمرزمان چوہدری کی صدارت میں ہونے والے نیب ایگزیکٹو بورڈ کے ایک اجلاس میں کیاگیا۔  جن افراد کے خلاف تحقیقات کی جائینگی ان میں سابق کلیکٹر میاں اظہرمجید کے علاوہ سلمان صدیق، عبداﷲ یوسف اور علی ارشد حکیم شامل ہیں۔


ان لوگوں پرالزام ہے کہ انہوں نے ایف بی آر کی کمپیوٹرائزیشن کا ٹھیکہ AGILITY نامی غیرملکی کمپنی کو دینے کیلئے بدعنوانی کی اور اپنے اختیارات کاغلط استعمال کیا جس سے ایک کروڑ دس لاکھ ڈالر کا نقصان ہوا اور AGILITY کمپنی نے پینسٹھ کروڑ ڈالر کی ادائیگی کا مطالبہ کیا ہے۔