Sunday, 26 May 2019, 06:55:54 am
سنٹرل ڈویلپمنٹ ورکنگ پارٹی کی 38 کروڑ 51 لاکھ روپے سے زائد مالیت کے منصوبے کی منظوری دی
May 16, 2019

سنٹرل ڈویلپمنٹ ورکنگ پارٹی نے 38 کروڑ 51 لاکھ روپے سے زائد مالیت کے ایک منصوبے کی منظوری دی اور 123 ارب روپے سے زائد مالیت کے چار منصوبوں کے جائزے کیلئے ایکنک کو بھجوائے ہیں۔سی ڈی ڈبلیو پی کا اجلاس آج اسلام آباد میں وزیرمنصوبہ بندی خسرو بختیار کی صدارت میں ہوا ۔حکومت سندھ نے اکسٹھ ارب روپے کا کراچی اربن موبیلٹی پراجیکٹ یلیو لائن پیش کیا جسے جائزے کیلئے ایکنیک کو بھیجنے کی سفارش کی گئی ۔وزیرمنصوبہ بندی خسروبختیار نے کہاکہ حکومت کراچی کی تقری کیلئے پرعزم ہے اور اس منصوبے کی تکمیل سے شہر کے لوگوں کو سفری سہولیات فراہم ہوںگی انہوں نے مزید کہاکہ یہ منصوبہ شہری ترقی اور گرین گروتھ کے وفاقی حکومت کے منشور اور مقاصد کے ساتھ ہم آہنگ ہے ۔چودہ ارب سے زائد مالیت کا حکومت سندھ کا ایک او راہم منصوبہ کراچی واٹر اینڈ سوریج سروسز امپرومنٹ پراجیکٹ فیز ون کو بھی جائزے کیلئے ایکنیک کوبھیجنے کی سفارش کی گئی اس منصوبے سے کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کی استعداد کار بہتر بنانے میں مدد ملے گی تاکہ کراچی کے شہریوں کو پانی اور حفظان صحت کی بہتر سہولیات فراہم ہوسکیں ۔ٹرانسپورٹ سے متعلقہ سترہ ارب روپے سے زائد مالیت کا منصوبہ گوادر بندرگاہ ایسٹ بے ایکسپریس وے وزارت بحری امور نے پیش کیا جسے جائزے کیلئے ایکنیک کو بھیج دیاگیا اس منصوبے کے تحت تقریبا 19 کلومیٹر چار رویہ ایکسپریس وے تعمیر کی جائے گی جو گوادر بندرگاہ کو مکران کوسٹل ہائی وے کے ساتھ ساتھ اس کے فری زون اور کنٹینر ٹرمینلز کے ساتھ ملائے گی۔خیبرپختونخوا کی حکومت نے تیس ارب روپے سے زائد مالیت کا کے پی اریگیٹڈ ایگریکلچر امپرومنٹ پراجیکٹ پیش کیا جس کو جائزے کیلئے ایکنیک کو بجھوا دیاگیا ۔وزارت قومی صحت نے 38کروڑ روپے سے زائد مالیت کا PIMS اسلام آباد کے امراض معدہ کے شعبہ کا منصوبہ پیش کیا جس کی CDWP نے منظوری دے دی ۔71 کروڑ روپے سے زائد مالیت کے بلوچستان پیکج iii میں DELAY ACHION ڈیموں کی تعمیر اور لاہور گارمنٹ سٹی پیپرز کا بھی جائزہ لیاگیا اور ان کی مزید پراسیسنگ کی منظوری دی گئی ۔