Tuesday, 24 April 2018, 05:52:50 am
بھارتی سپریم کورٹ کی بے حرمتی کے بعد قتل ہونے والی مسلمان بچی کے اہل خانہ کو سیکورٹی فراہم کرنے کی ہدایت
April 16, 2018

بھارتی سپریم کورٹ نے مقبوضہ کشمیر کی کٹھ پتلی حکومت سے کہا ہے کہ Kathua میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی ننھی بچی کے خاندان اور وکیل کو تحفظ فراہم کیا جائے۔آج نئی دلی میں مقدمے کی سماعت کے دوران عدالت نے جموں وکشمیر حکومت سے کہا کہ وہ اس سلسلے میں جواب جمع کرائے کہ کیا ریاست کی عدالتوں سےKathua کے مقدمے کو چندی گڑھ منتقل کرنے کی درخواست کی منظوری دی جائے۔سپریم کورٹ کا یہ اقدام آٹھ سالہ بچی کے والد کی طرف سے سکیورٹی طلب کرنے کی درخواست دائر کرنے کے بعد اٹھایا گیا ہے۔بچی کے والد نے خاندان اور ان کی نمائندگی کرنے والے وکیل کیلئے تحفظ کی درخواست دی ہے۔ادھر آج ضلع Kathua میں عدالت نے مقدمے کی سماعت 28 تاریخ تک ملتوی کردی اور تمام ملزموں کو آج عدالت میں پیش کیا گیا۔وزیراعظم نریندر مودی کی بھارتیہ جنتا پارٹی کے وزراء کی جانب سے ملزموں کی حمایت پر کئی دنوں سے جاری یہ غم وغصہ پورے بھارت میں مظاہروں میں تبدیل ہوگیا۔