کشمیری آج بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طور پر منارہے ہیں
15 اگست 2016 (15:09)
0

کنٹرول لائن کے دونوں جانب اور دنیا بھر میں مقیم کشمیری آج بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طور پر منارہے ہیں جس کا مقصد دنیا کو یہ پیغام دینا ہے کہ بھارت نے ان کے مادر وطن پر غیر قانونی تسلط قائم کررکھا ہے۔ مظفر آباد میں سنٹر پریس کلب پرایک بڑا احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ آزاد کشمیر کے وزیراعظم راجہ فاروق حیدر خان اور جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سینیٹر سراج الحق ،جماعت اسلامی آزاد کشمیر کے امیر عبدالرشید ترابی اورمختلف تنظیموں سے تعلق رکھنے والے کشمیری رہنمائوںنے مظاہرے میں شرکت کی۔ مقررین نے مقبوضہ کشمیرمیں بھارت کی ریاستی دہشت گردی کی سخت مذمت کی۔
مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اوردوسری پابندیوں کے باوجود آزادی، اور پاکستان کے حق میں اور بھارت کے خلاف ریلیاں نکالی جارہی ہیں اور احتجاج کیا جارہاہے۔ مقبوضہ کشمیر میں مسلسل38 ویں روز مکمل ہڑتال ہے اور تمام کاروباری مراکز بند ہیں۔ 

ادھر بھارتی فوج نے ضلع بارہ مولا میںآج ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی میں دو کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا۔ جبکہ سری نگر میں آج ایک حملے میں بھارتی سنٹرل ریزرو پولیس فورس کے دو اہلکار ہلاک اور متعدد شدید زخمی ہوگئے ۔