Wednesday, 22 January 2020, 06:48:13 pm
اورنج لائن میٹروٹرین سے پاکستان کوٹرانسپورٹ کی بڑھتی ضروریات سے نمٹنےمیں مدد ملےگی،چینی ماہر
December 15, 2019

لاہور میں عوام کے لئے تیز رفتار ٹرین کے پہلے منصوبے اورنج لائن میٹرو ٹرین سے پاکستان کو عوامی ٹرانسپورٹ کی بڑھتی ہوئی ضروریات سے بہتر طور پر نمٹنے میں مدد ملے گی۔

یہ بات چینی ماہر Zhou Ronc نے بیجنگ کی Renmin یونیورسٹی کے معاشی علوم کے Chonc Yang انسٹیٹیوٹ میں گلوبل ٹائمز سے ایک انٹرویو میں کہی۔Zhou Rong نے کہا کہ اس اول درجے کی جدید عوامی سفری سہولت کا اضافہ پاکستان کی معیشت اور عوام کے لئے ایک بڑی نعمت ثابت ہو گا۔چینی ماہر نے کہا کہ یہ منصوبہ پاک چین دوستی کی علامت ہے اور اس کے ذریعے عالمی معیار کی اول درجے کی حامل ٹرانسپورٹ سروس میسر آئے گی۔انہوں نے کہا کہ اس نظام سے لاہور میں مسافروں اور دفتری کارکنوں کو فائدہ حاصل ہو گا اور ٹرین کے کشادہ ڈبوں میں خواتین کے لئے مخصوص جگہ ہو گی۔Zhou Rong نے کہا کہ برقی سب وے کے نظام سے ظاہر ہوتا ہے کہ پاکستان میں توانائی کے معاملات سے موثر انداز میں نمٹا جا رہا ہے۔اورنج لائن میٹرو ٹرین بنیادی ڈھانچے کی تکمیل کے بعد گزشتہ ہفتے پہلی مرتبہ آزمائشی طور پر چلائی گئی تھی۔اس اقدام کو چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت ایک بڑی پیش رفت قرار دیا جا رہا ہے۔یہ آزمائشی سفر لاہور میں 25 کلومیٹر کے روٹ پر کیا گیا۔ اس کے کل 26 اسٹیشن ہیں جن میں سے 24 سٹاپ زمین کی سطح سے بلند اور دو سٹاپ زیرزمین ہیں۔ توقع ہے کہ اس ٹرین سے سفر کا وقت 70 فیصد کم ہو جائے گا۔اس نظام میں توانائی کی بچت کرنے والی 27 برقی ٹرینیں شامل ہیں جن کے ڈبے ایئرکنڈیشنڈ ہیں اور ان کی رفتار 80 کلومیٹر فی گھنٹہ ہو گٰ۔توقع ہے کہ سال 2020ء کے پہلے چھ ماہ میں اس کے مکمل طور پر فعال ہونے کے بعد روزانہ اڑھائی لاکھ مسافر استفادہ کرینگے۔