نفیس ذکریا نے کہا ہے کہ ٹیکنالوجی اور ہتھیاروں کی فروخت سے بھارت کی جارحانہ فوجی لائحہ عمل اختیار کرنے اور فوجی مہم جوئی کرنے کیلئے حوصلہ افزائی ہو گی۔

 پاکستان کا امریکہ کی جانب سے بھارت کو جدید فوجی آلات کی فروخت پر اظہار تشویش
14 ستمبر 2017 (15:17)
0

پاکستان نے کہا ہے کہ امریکہ کی جانب سے بھارت کو جدید فوجی ٹیکنالوجی اور آلات کی فروخت سے جنوبی ایشیاء میں فوجی عدم توازن پیدا ہو گا اور سٹرٹیجک استحکام کو نقصان پہنچے گا۔جمعرات کو اسلام آباد میں ہفتہ وارنیوز بریفنگ کے دوران سوالوں کا جواب دیتے ہوئے دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس ذکریا نے کہا کہ ٹیکنالوجی اور ہتھیاروں کی فروخت سے بھارت کی جارحانہ فوجی لائحہ عمل اختیار کرنے اور فوجی مہم جوئی کرنے کے لئے حوصلہ افزائی ہو گی۔

انہوں نے کہا کہ جدید فوجی آلات اور ٹیکنالوجی کی منتقلی اور بارہا دی جانے والی رعایتیں تزویراتی ضبط وتحمل کے نظام کے قیام کی کوششوں کا حصہ بننے کے لئے بھارت کی حوصلہ شکنی کریں گی۔
ترجمان نے کہا کہ بھارت نے راء کے کارندے کلبھوشن یادیو کو پاکستان میں تخریبی کارروائیوں کے لئے بھیجا تھا اور اب بھارت اسے ایک انسانی معاملے کے طور پر پیش کر کے اصل مسئلے سے توجہ ہٹانے کی کوشش کر رہا ہے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان افغانستان میں امن واستحکام کے لئے کئے جانے والے تمام اقدامات میں تعاون کے لئے پرعزم ہے۔ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ پاکستان نے رخائن میں روہنگیا مسلمانوں کا معاملہ مختلف فورموں پر اٹھایا ہے۔