قومی اسمبلی میں بجٹ پر بحث جاری
14 جون 2016 (16:18)
0

قومی اسمبلی کا اجلاس اسلام آباد میں جاری ہے سپیکر سردار ایاز صادق صدارت کررہے ہیں۔
اجلاس کے آغاز پر ڈاکٹر شیریں مزاری نے کورم پورا نہ ہونے کی نشاندہی کی۔
سپیکر نے کورم پورا ہونے تک ایوان کی کارروائی معطل کردی۔

قومی اسمبلی میں مالی سال 17-2016 کی بجٹ تجاویز پر عا م بحث کا آج دوبارہ آغاز کیا گیا۔

بحث میں حصہ لیتے ہوئے رمیش لال نے الزام لگایا کہ اقلیتوں کی فلاح و بہبود کے لئے بجٹ میں کوئی اضافہ نہیں کیا گیا۔
انہوں نے کہا کہ اقلیتوں کے لئے ملازمتوں کے پانچ فیصد کوٹے پر عملدرآمد نہیں کیا جارہا۔
خسرو بختیار نے کہا کہ ایشیا میں پاکستان کی اقتصادی ترقی کا عمل سب سے زیادہ سست روی کا شکار ہے۔
انہوں نے کہا کہ مضبوط جمہوریت کے لئے مستحکم معیشت ناگزیر ہے۔

انہوں نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ کی قومی ملکیت ہونی چاہیے۔
انہوں نے جنوبی پنجاب کے پسماندہ علاقوں کی ترقی کے لئے اقدامات کا مطالبہ کیا۔

ایوان میں آج تین بل پیش کئے گئے۔
جن میں غیر قانونی بے دخلی کا ترمیمی بل 2016 ، دی میرین انشورنس بل2016 اور پاکستان نیشنل ایگریڈیشن کونسل بل 2016 شامل ہیں۔
یہ بل داخلہ کے وزیر مملکت محمد بلیغ الرحمان اور وزیر تجارت خرم دستگیر خان نے پیش کئے۔
سپیکر نے بل متعلقہ قائمہ کمیٹیوں کو بھیج دئیے ہیں۔