Monday, 19 February 2018, 02:26:20 pm
سرکاری اخراجات میں قلیل ردو بدل سے خوراک کی قلت کے خاتمے میں مدد مل سکتی ہے، رپورٹ
February 14, 2018

حکومت پاکستان کی توثیق سے آج جاری ہونے والی ایک اہم آزاد رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ سرکاری اخراجات میں قلیل ردو بدل سے خوراک کی قلت کے خاتمے اور غذائیت بہتر بنانے کے علاوہ ملک کی بتدریج اقتصادی ترقی میں مدد مل سکتی ہے ۔پاکستان میں تحفظ خوراک اور غذائیت کے تزویراتی جائزے کے عنوان سے رپورٹ میں پائیدار ترقی کے ہدف نمبر دو اور پاکستان میں خوراک کی قلت کے خاتمے کی راہ میں درپیش چیلنجوں کی نشاندہی کی گئی ہے اور وفاقی اور صوبائی سطح پر ان پرقابو پانے کے طریقوں کے بارے میں تجاویز دی گئیں ہیں۔اقتصادی امور ڈویژن کے سیکرٹری عارف احمدخان کے مطابق رپورٹ کی تجاویز پاکستان کیلئے کیلئے پائیدار ترقی کے ہدف نمبر دو کے مقررہ وقت تک حصول میں مفید ثابت ہوگی جو ہم نے 2025 تک خوراک سے محروم تیس فیصد عوام کی شرح کم کرنے اور 2030 تک غذائیت کی کمی سے نمٹنے کیلئے مقرر کیا ہے ۔پاکستان نے گزشتہ دہائیوں میں غیرمعمولی پیش رفت کی ہے اور 2010 سے اب تک تحفظ خوراک اورغذائیت کے شعبے میں بہتری لائی ہے ۔پاکستان میں اقوام متحدہ کے ریذیڈنٹ کوارڈینیٹر نیل بوہنے نے کہا ہے کہ جائزے سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ پاکستان آگے بڑھ رہا ہے جبکہ  خوراک کے تحفظ اور غذائیت کے بہتر نظام پرخصوصی توجہ دی گئی ہے۔