Monday, 20 August 2018, 07:58:13 am
پاکستان بھارت کی کسی بھی مہم جوئی کا موثر جواب دےگا،وزیردفاع
February 15, 2018

 سینیٹ میں پاکستان کی سیکورٹی پالیسی کے بارے میں ایک بیان میں انہوں نے کہاکہ کسی بھی قسم کی بھارتی جارحیت ، طاقت کے غلط اندازے یا مہم جوئی کا اس کے پیمانے ، طریقے یا محل وقوع سے قطع نظر بھرپورجواب دیاجائے گا۔

وزیردفاع نے کہاکہ پاکستان کی سرزمین کے چپے چپے کا بھرپور دفاع کیا جائے گا۔

انہوں نے کہاکہ ثبوت کے بغیر پاکستان پر الزام عائد کرنے کی بجائے بھارت کو پاکستان میں جاسوسی کرانے کاجواب دینا چاہیے  انہوں نے کہاکہ کلبھوشن یادیو کاجیتا جاگتا ثبوت دنیا کے سامنے ہے ۔

انہوں نے کہاکہ بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کی گرفتاری اس بات کوظاہر کرتی ہے کہ بھارت پاکستان میں جاسوسی کیلئے تیسرے ملک کو استعمال کرتا ہے۔

خرم دستگیر نے کہاکہ بھارت گیارہ سال قبل سمجھوتہ ایکسپریس دہشت گردی واقعے میں قتل ہونے والے بیالیس پاکستانیوں کو انصاف دلانے میں ناکام رہا ہے۔

انہوں نے کہاکہ پاکستان کے خلاف کولڈ سٹارٹ DEPLOYMENT کنٹرول لائن کی سنگین خلاف ورزیاں اور کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیاں بھارت کے جنگی جنون کا منہ بولتا ثبوت ہیں۔خرم دستگیر نے کہاکہ بھارت کے جارحانہ روئیے سے خطے میں قیام امن کے امکانات کم ہوگئے ہیں  ۔

انہوں نے کہاکہ بھارت کنٹرول لائن پر بڑے پیمانے پر جنگ بندی کی خلاف ورزیاں کررہا ہے  انہوں نے کہاکہ گزشتہ سال بھارت نے جنگ بندی کی اٹھارہ سو سے زائد خلاف ورزیاں کیں جن کے نتیجے میں باون افراد شہید ہوئے ۔

وفاقی وزیر نے افغانستان میں امریکہ کی ناکامی کے حوالے سے کہا کہ امریکہ ، افغانستان میں اربوں ڈالر کے اخراجات کے باوجود جنگ نہیں جیت سکا اوربڑی تعداد میں امریکی ہلاک ہورہے ہیں  انہوں نے کہاکہ افغانستان میں اپنی ناکامی کا الزام پاکستان پر عائد نہیں کیاجاناچاہیے ۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں اربوں ڈالر کانقصان برداشت کیا ہے اور ہزاروں جانوں کی قربانی دی ہے ۔

خرم دستگیر نے کہاکہ پاک امریکہ تعلقات میں بہتری ، دھمکیوں ، نوٹس جاری کرنے اور امداد کی معطلی کے ذریعے ممکن نہیں ، انہوں نے کہاکہ ایک دوسرے پرالزامات عائد کرنا کسی کے مفاد میں نہیں۔

وفاقی وزیر نے پاک افغانستان تعلقات کے بارے میں کہاکہ پاکستان افغانستان کو ایک خودمختار ہمسایہ کے طورپر دیکھا ہے جس کے ساتھ ہمارے تاریخی، ثقافتی،تجارتی اور مذہبی تعلقات ہیں ، انہوں نے کہاکہ پاکستان ایک پرامن ، مستحکم ، خوشحال اور جمہوری افغانستان کا خواہاں ہے ۔

وزیردفاع نے کہاکہ پاکستان اور چین افغانستان میں داخلی مفاہمت، پاک بھارت تعلقات میں بتدریج بہتری اور پاکستان میں سلامتی کی مستحکم صورتحال کے مشترکہ ہدف پرکام کررہے ہیں۔ایوان کا اجلاس اب کل سہ پہر تین بجے پھر ہوگا ۔