پاکستانی مندوب مسعود خان نے کہا ہے کہ سلامتی کونسل کو مزید جامع بنانے کی ضرورت ہے کیونکہ اقوام متحدہ کا تعلق منتخب ملکوں سے نہیں بلکہ سب سے ہے۔

پاکستان کاسلامتی کونسل میں نئی مستقل نشستوں کی تخلیق بارے اپنےموقف کااعادہ
13 نومبر 2014 (15:15)
0

اقوام متحدہ میں پاکستان نے اصلاحات شدہ سلامتی کونسل میں نئی مستقل نشستوں کی تخلیق کے حوالے سے اپنے موقف کا اعادہ کیا ہے۔کونسل میں مناسب نمائندگی کے حصول کے بارے میں جنرل اسمبلی کے مباحثے میں حصہ لیتے ہوئے پاکستانی مندوب مسعود خان نے کہا کہ پندرہ رکنی سلامتی کونسل کو مزید جامع بنانے کی ضرورت ہے کیونکہ اقوام متحدہ کا تعلق منتخب ملکوں سے نہیں بلکہ سب سے ہے۔

انہوں نے کہا کہ مستقل نشست کے لئے بطور امیدوار خود کو پیش کرنے والے ملکوں بھارت ، برازیل ، جرمنی اور جاپان کو یہ سمجھنا چاہئے کہ درمیانے حجم کی حامل بہت سے ریاستیں اپنے رقبے ، آبادی ، معیشت ، فوجی صلاحیت ، اقوام متحدہ کے امن مشنوں میں خدمات اور جمہوریت اور انسانی حقوق کے لئے اپنے پختہ عزم کی بنیاد پر ان کا مقابلہ کرتی ہیں۔


پاکستانی مندوب نے ایک سو ترانوے رکنی جنرل اسمبلی کو بتایا کہ اصلاحات کا مقصد سلامتی کونسل میں استحقاق کے نئے مراکز قائم کرنا نہیں بلکہ چھوٹے ، درمیانے اور بڑے ملکوں کے پورے خاندان کے مفادات اور خواہشات کو مدنظر رکھتے ہوئے اسے جمہوری بنانا ہے۔