اجلاس وزیراعظم کےاس فیصلےکاحصہ ہے کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری کے روٹ پرتمام بڑی سیاسی پارٹیوں کواعتمادمیں لیاجارہاہے۔

اقتصادی راہداری پرپارلیمانی رہنمائوں کااجلاس
13 مئی 2015 (10:26)
0

وزیراعظم نوازشریف کی زیرصدارت اسلام آباد میں پارلیمانی رہنمائوں کااجلاس جاری ہےجس میں پارلیمانی رہنمائوں کوچین پاکستان اقتصادی راہداری کےحوالے سےاعتماد میں لیا جارہاہے۔وزیراعظم نوازشریف نے اجلاس سے خطاب میں کہاکہ جمہوریت کی اصل روح مشاورت ہی ہے ۔اس سے قبل بھی آئینی ترمیم اتفاق رائے سے منظور کی ۔
وفاقی وزیر منصوبہ بندی وترقی احسن اقبال نے شرکاء کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ چین کے ساتھ تعلقات ہماری خارجہ پالیسی کا اہم جزو ہے ۔اقتصادی راہداری کا مقصد دونوں ملکوں کے درمیان اقتصادی روابط قائم کرنا ہے ۔دونوں ممالک نے انڈسٹریل زونز کے لئے مشترکہ ورکنگ گروپ قائم کئے ۔علاقائی رابطوں کو مضبوط بناکرہی ترقی کی منازل طے کی جاسکتی ہیں ۔

واضح رہے کہ چینی صدر شی چن پنگ کے گزشتہ مہینے پاکستان کے دورے کے دوران چین پاک اقتصادی راہداری کے منصوبے پر دستخط کئے گئے جس سے خطے میں ترقی اورخوشحالی کے ایک نئے دور کا آغاز ہوگا۔ اس بڑے منصوبے کے ذریعے گوادر کی بندرگاہ کو شاہراہوں ،ریلوے لائن کے ذریعے چین سے ملایا جائے گا۔